اسلام آباد میں کتوں کےلیے شیلٹر ہوم قائم

نجی سطح پر سہولیت کی فراہمی

اسلام آباد میں نجی سطح پر ایک ڈاگ شیلٹر ہوم قائم کردیا جس میں جڑواں شہروں سے 100 سے زائد کتے لائے گئے ہیں جہاں کتوں کو خوراک کے ساتھ طبی امداد بھی دی جاتی ہے۔

ڈاگ شیلٹر قائم کرنے والے ڈاکٹر غنی اکرم کا کہنا ہے کہ کتوں کو گولیاں مارنا اور زہر دینا مسئلے کا حل نہیں اس کے لیے حکومت کتا مار پالیسی تبدیل کرنی ہوگی۔

شیلٹر ہوم میں زخمی اور بیمار کتوں کی علاج فزیو تھراپی اور ویکسی نیشن بھی کی جاتی ہے۔ سینٹر میں مناسب صفائی انتظامات کے ساتھ بستر اور چار پائی کا بھی بندوبست موجود ہے۔

ڈاکٹر غنی اکرام کا کہنا ہے کہ راولپنڈی اسلام اباد کے لوگ کال کر کے ہمیں بتا دیتے ہیں اور ہم جا مکر جانوروں کو یہاں لے آتے ہیں۔ ہمارا ماہانہ خرچہ 5 سے 6 لاکھ روپے ہے ہمارے پاس اپنی کوئی کلینکل سہولت اس وجہ سے زیادہ تر سروس باہر سے ہی لینی پڑتی ہیں۔

ڈاکٹر غنی کہتے ہیں سرکار صرف رویہ اور پالیسی بدلے دستیاب وسائل میں سارے مسائل حل ہونے میں دیر نہیں لگے گی۔

متعلقہ خبریں