افغان سفیرکی بیٹی اغوانہیں چندگھٹنوں کیلئےلاپتاہوئی،شیخ رشید

افغان سفیر کی بیٹی نے 4 ٹیکسیاں تبدیل کیں

Your browser does not support the video tag.

وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد کا کہنا ہے کہ افغان سفیر کی بیٹی اغوا نہیں صرف چند گھنٹوں کیلئے لاپتا ہوئی۔ سفیر کی بیٹی نے 4 مختلف ٹیکسیاں تبدیل کیں، چاروں ڈرائیور اور ٹیکسیاں ہماری تحویل میں ہیں۔

عید الاضحی کے موقع پر راول پنڈی میں 21 جولائی بروز بدھ میڈیا سے گفتگو میں وفاقی وزیر نے کہا کہ کیا کرائم دنیا بھر میں نہیں ہورہے، ممبئی میں کرائم نہیں ہوتے، پاکستان کے ادارے اس کیس کی تحقیقات میں لگے ہوئے ہیں، لاہور کے کیس کو بھی 16 گھنٹے کے اندر پکڑا، ایک سفیر کی بیٹی ہماری اپنی بیٹیوں کے برابر ہے۔

داسو واقعہ سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ داسو واقعے کی تحقیقات اعلیٰ ترین سطح پر کی جا رہی ہیں،تحقیقاتی ادارے داسو واقعے کی تحقیقات کر رہے ہیں،واقعے کی ساری تفصیل دفتر خارجہ کو بھیجی گئی ہے، لاہور واقعے کی طرح داسو واقعے کی بھی تحقیق ہو رہی ہے ۔

شیخ رشید نے کہاکہ مریم نواز مودی کے بجائے عمران خان کے خلاف باتیں کر رہی ہیں،وہ کشمیر میں مودی کے خلاف تو کچھ بول نہیں رہیں۔ میں نے مریم نواز کے خلاف کبھی غیرشائستہ زبان استعمال نہیں کی تاہم وہ کشمیر میں غیر پارلیمانی زبان استعمال کر رہی ہیں

وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد کا کہنا ہے کہ پاکستان کے خلاف اسرائیل اور بھار ت کی ہائبرڈ وار چل رہی ہے، بھارتی میڈیا افغان سفیرکی بیٹی کے واقعے پر متعلق پروپیگنڈا کررہا ہے، ایک سفیر کی بیٹی ہماری اپنی بیٹیوں کے برابر ہے۔ آپ یہ کہہ سکتے ہیں کہ یہ افغان سفیر کی بیٹی کا لاپتہ ہونے کا کیس ہے،ہماری نظر میں افغان سفیر کی بیٹی کا کیس اغوا کا نہیں ہے وہ چند گھنٹےکیلئے لاپتہ ہوئیں ۔

وزیر داخلہ کے مطابق حکومت افغان سفیر کی بیٹی کا کیس لڑے گی اور ان کا انتظار کرے گی کہ وہ آکر شناخت کریں،ہماری تحقیق کےمطابق کسی ٹیکسی میں کوئی بندہ نہیں بیٹھا، افغان سفیر کی بیٹی نے چار مقامی ٹیکسیاں تبدیل کیں اس کا مطلب ہے یہ امن و امان کا معاملہ نہیں ہے۔

متعلقہ خبریں