امریکہ نے پاکستان پر واجب الادا 132 ملین ڈالر قرض کی واپسی موخر کر دی

پیر کو انٹونی بلنکن نے فوڈ سکیورٹی کی مد میں پاکستان کے لیے ایک کروڑ ڈالر کی امداد کا بھی اعلان کیا تھا۔ (فوٹو: اے پی)

امریکہ نے پاکستان پر واجب الادا 13 کروڑ 20 لاکھ ڈالر کے قرض کی واپسی موخر کر دی ہے۔
جمعے کو پاکستان میں امریکی سفارت خانے کی جانب سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ ’امریکی سفیر ڈونلڈ بلوم نے آج جی20 کے قرض منسوخ  پروگرام کے تحت دوسرے امریکہ-پاکستان دو طرفہ معاہدے پر دستخط کیے، جس سے پاکستان کو امریکی قرضوں میں ریلیف کے طور پر 13 کروڑ 20 لاکھ ڈالر فراہم کیے گئے ہیں۔‘
مزید پڑھیں
بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ ’ہماری ترجیح پاکستان میں وسائل کو اس سمت موڑنا ہے جہاں ان کی ضرورت ہے۔‘
واضح رہے اس سے قبل پیر کو امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے پاکستانی وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری سے واشنگٹن میں ملاقات کے بعد فوڈ سکیورٹی کی مد میں پاکستان کے لیے ایک کروڑ ڈالر کی امداد کا بھی اعلان کیا تھا۔
انہوں نے کہا تھا کہ امریکہ نے انسانی امداد کی مد میں پاکستان کو پانچ کروڑ 60 لاکھ ڈالر دینے کا وعدہ کیا ہے اور امدادی سامان سے بھرے 17 طیارے بھیج دیے ہیں اور ساتھ ہی طویل المدتی بنیادوں پر مدد کرنے کا وعدہ بھی کیا ہے۔