اپوزیشن حکومت کوکیوں ہٹانہیں پا رہی، رانا ثناء نےوجہ بتادی

سماء کے پروگرام سات سے آٹھ میں گفتگو

Your browser does not support the video tag.

رہنما مسلم لیگ رانا ثناء اللہ کا کہنا ہے کہ اس تاثر کا حقیقت سے کوئی تعلق نہیں کہ مسلم لیگ ن حکومت کو نہیں ہٹانا چاہتی بلکہ سچ تو یہ ہے کہ اس مقصد کے حصول کے لیے ہمارے پاس مطلوبہ تعداد نہیں ہے۔

سماء کے پروگرام سات سے آٹھ میں گفتگو کرتے ہوئے رانا ثناء اللہ کا کہنا تھا کہ جس دن ہمارے پاس نمبرز پورے ہوں گے ہم عمران خان یا عثمان بزدار کو ایک دن بھی نہیں دیں گے۔رانا ثناءاللہ کا کہنا تھا کہ اگر جہانگیر ترین گروپ موجود رہتے تو پھر کوئی راستہ نکل سکتا تھا مگر عمران خان نے ان کو این آر او دے دیا۔بلاول بھٹو کے مسلم لیگ ن سے متعلق بیانات پر تبصرہ کرتے ہوئے رانا ثناء اللہ کا کہنا تھا کہ اس وقت آزاد کشمیرمیں الیکشن مہم چل رہی ہے اور ایسے مواقع پر اس طرح کی باتیں کی جاتی ہیں جو سیاسی پارٹیوں کی ضرورت بھی ہوتی ہے۔انہوں نے کہا کہ اگر مریم نواز نے آرپار والی بات کی تھی تو بلاول بھٹو نے بھی یہ کہا تھا کہ ہم استعفے دیں اور وہ سندھ حکومت کی قربانی دیں گے۔رانا ثناءاللہ کا کہنا تھا کہ مرایم نواز نے جو بات کی تھی وہ اس پر قائم ہیں ہم ایک دوسرے کے خلاف الیکشن لڑیں گے مگر تضحیک نہیں کریں گے۔رہنما ن لیگ کا کہنا تھا کہ شہبازشریف سے متعلق شاہد خاقان عباسی کا بیان ان کی ذاتی رائے ہے لیکن ہماری خواہش ہے کہ رائے کا اظہار پارٹی کے اندر ہونا چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ آصف زرداری اگر پنجاب کے ڈومیسائل کی بات کرتے ہیں تو یہ سیاسی بات ہے اور وہ پورے سندھ کو مخاطب کرکے یہ بات کرتے ہیں جس سے انہیں سیاسی فائدہ ہوتا ہے۔

رانا ثناءاللہ کا کہنا تھا کہ عدالت کو بھی اس بات کا نوٹس لینا چاہیے کہ ایک شخص سندھ سے تعلق رکھتا ہے لیکن اس کا ٹرائل راولپنڈی میں ہورہا ہے، ان کا ٹرائل کراچی میں ہونا چاہیے۔

متعلقہ خبریں