اہم خبر: بجٹ2021-22 میں کراچی کیلئے 739ارب روپے مختص

News-Outlook_urdu-version

ہفتہ 12 جون کی چند اہم خبروں کا احوال۔

حکومت نے مالی سال 2021-22 میں 8 ہزار 487 ارب روپے کے بجٹ ميں پی ٹی آئی سرکار نے ٹيکسوں کی چھوٹ سيل لگا دی۔ 12 اقسام کے ود ہولڈنگ ٹیکسز ختم کردیے گئے، سیلز ٹیکس 17 فیصد سے کم کر کے ساڑھے 12 فيصد جبکہ 800 سی سی تک کی مقامی گاڑیوں پر فیڈرل ایکسائز ڈیوٹی ختم کردی گئی۔

سرکاری ملازمين کی تنخواہوں اور پنشن ميں 10 فيصد اضافہ کردیا گیا۔ تنخواہ دار طبقے پر نياٹيکس نہیں لگایا جائے گا۔ کم سے کم تنخواہ 20 ہزار روپے مقرر ہوگئی جبکہ آن لائن مصنوعات کی فروخت کرنے والوں کو حکومت ٹیکس نیٹ میں لے آئی۔

حکومت نے تين سال بعد دفاعی بجٹ بڑھا ديا۔ نئے سال ميں دفاع کيلئے 1 ہزار 373 ارب روپے مختص کردیے گئے۔

درآمدی اشياء سونے اور چاندی پر سيلز ٹيکس بڑھا ديا، ميک اَپ کا سامان مہنگا کرديا۔

بجٹ 2021-22 میں کراچی ٹرانسفارميشن پلان کيلئے 739 ارب روپے مختص کیے گئےہیں، رقم واٹر سپلائی، سيوريج، سالڈ ويسٹ مينجمنٹ اور سڑکوں کی تعيمر پرخرچ کی جائے گی۔

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کرونا وائرس سے ملک میں 57 مریض انتقال کرگئے۔ مجموعی اموات 21ہزار 633 ہوگئيں، اين سی او سی کے مطابق 1ہزار 194 نئے کيسز رپورٹ ہوئے جبکہ مثبت کيسز کی شرح 3.3 فيصد رہی۔

کراچی یونیورسٹی کی حدود سے گزرنے والی 50 سال پرانی 84 انچ قطرکی پائپ لائن کی مرمت کئی گھنٹوں بعد بھی نہ کی جاسکی، ہزاروں گيلن پانی يونيورسٹی روڈ پربہہ گيا۔

پاکستان سپر لیگ (پی ايس ايل) سکس کے سنسنی خيز ميچز جاری ہیں، اسلام آباد یونائیٹڈ نے یکطرفہ مقابلے کے بعد کوئٹہ کی ٹیم کو 10وکٹوں سے شکست دیدی۔

متعلقہ خبریں