بلوچستان کےامن کوسبوتاژ نہیں کرنےدینگے، وزیراعظم

دہشتگردوں کیخلاف ہماری لڑائی جاری رہیگی

وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ دہشتگردوں کو بلوچستان کا امن و ترقی سبوتاژ کرنے کی اجازت نہیں دیں گے۔

بلوچستان میں وزیراعظم عمران خان نے قائداعظم ریزیڈنسی میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ شب بلوچستان میں ہمارے سپاہیوں پر دہشتگرد حملے کے نتیجے میں 4 جوان شہید اور 8 زخمی ہوئے، جس کی شدید مذمت کرتا ہوں۔ میری دعائیں اور ہمدردیاں شہداء کے اہلِ خانہ کیساتھ ہیں۔

وزیراعظم عمران خان نے مزید کہا کہ بلوچستان میں دہشتگردوں کیخلاف ہماری لڑائی جاری رہیگی اور ہم انہیں بلوچستان میں امن و ترقی تاراج کرنے کی اجازت نہیں دینگے۔

عمران خان نے کہا کہ ماضی کی حکومتوں نے بلوچستان پر توجہ نہیں دی اور نظر انداز کیا، ہماری حکومت نے بلوچستان کو جتنا اپنا سمجھا ہے یہ پہلا موقع ہے جب بلوچستان میں ترقیاتی مںصوبوں پرپیسہ خرچ ہورہا ہو۔ معاشی مشکلات کے باوجود بلوچستان کو فنڈز دیئےگئے، ہمارا ملک اب مشکل وقت سےنکل چکا ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ ہمارا ملک مشکل دور سے نکل رہا ہے، ہماری حکومت آئی ہی تھی کہ مخالفین نے ناکامی کا شور مچادیا اور پوری قوم سے کہتے رہے کہ ملک اور معیشت تباہ ہوگئی کیونکہ حکومت اس معاشی بحران میں کامیاب ہوجاتی تو ان کی سیاسی دکانیں بند ہوجائیں گی، اپوزیشن چاہتی تھی کہ حکومت ناکام ہو۔

انہوں نےکہا کہ پچھلے سال شرح نمو 0.5 تھی لیکن گزشتہ ہفتے شرح نمو 4 فیصد سے زائد ہوگئی تو اپوزیشن مانتی نہیں اور کہہ رہی ہے یہ نمبرز ٹھیک نہیں۔ یہ لوگ حکومت گرانے کی تاریخیں دیتے رہتے ہیں، مجھے ڈر ہےکہ اپوزیشن خود ایک ساتھ ہے یا نہیں۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ جس قوم نے ترقی کی اس کے لیڈر ملک میں ہی رہے، لندن میں محل خرید کر قوم ترقی نہیں کرسکتی، ماضی میں ہمارے حکمرانوں کی عیدیں، گھر ،جائیدادیں سب ملک سے باہر تھیں، یہ ہو ہی نہیں سکتا کہ ملک کا پیسہ چوری ہو اور ملک ترقی کرے۔

متعلقہ خبریں