بھارت نےمقبوضہ کشمیر دھماکوں کاالزام پاکستان پرلگا دیا

فوٹو: انڈیا ٹوڈے

بھارتی حکومت و فوج نے مقبوضہ کشمیر میں ڈرون حملے کا الزام پاکستان پرعائد کردیا۔

بھارتی میڈیا نے پاکستان کیخلاف پروپيگنڈا کرتے ہوئے رپورٹ چلائی کہ مقبوضہ کشمیر میں ڈرون حملے میں پاکستان ملوث ہے جبکہ بھارتی حکومت اور فوج نے دھماکے کوئی ثبوت پاکستان کو فراہم نہیں کیے۔

بھارت نے الزام عائد کیا ہے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فضائی حدود کے 14کلوميٹر اندر گھس کر نشانہ بنانے کی کوشش کی گئی جبکہ ڈرون کا استعمال پے لوڈ کے ساتھ ہوا اور 100ميٹر کی بلندی سے 4 کلو آئی ڈی استعمال کرکے دھماکا کیا گیا۔

بھارت موقف پر وزیرداخلہ شیخ رشید نے کہا کہ بھارت ايک بار پھر پاکستان کے ليے مسائل پيدا کرنا چاہتا ہے، دشمن کی تلملاہٹ بتارہی ہے کہ اسے پاکستان کی ترقی ايک آنکھ نہيں بھارہی۔ بھارت جان لے کہ پاکستانی فورسز اندرونی اور بيرونی دشمنوں کی کسی بھی حرکت کا منہ توڑ جواب دينے کےلیے تیار ہیں۔

مقبوضہ کشمیر:ایئرفورس بیس پر ڈرون حملہ،بھارتی میڈیا کا دعویٰ

یاد رہے کہ دو روز قبل مقبوضہ کشمیر کےجموں ایئرفورس اسٹیشن پر ہونے والے 2 دھماکے ڈرون سے کیے گئے تھے۔ جس میں بھارتی ایئرفورس کے 2 اہلکار بھی زخمی ہوئے تھے۔

اس سے قبل بھارتی حکومت کے قریب کشمیری رہنماؤں نے وزیراعظم نریندر مودی سے کشمیر کی خصوصی آئینی حیثیت دوبارہ بحال کرنے کا مطالبہ کردیا تھا۔

کشمیری رہنماؤں کاوادی کی خصوصی حیثیت بحال کرنےکا مطالبہ

انتہاء پسند مودی سرکار کی جانب سے بھارتی قربت کی حامل کشمیری سیاسی جماعتوں کی قیادت کو 24جون کو دہلی میں آل پارٹی میٹنگ کی دعوت دی گئی جس میں حریت قیادت کے نمائندے شریک نہیں تھے۔ اس ملاقات میں محبوبہ مفتی سمیت کئی مقامی جماعتوں نے نریندر مودی سے کشمیر کی خصوصی آئینی حیثیت دوبارہ بحال کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔

متعلقہ خبریں