بھارت ’ٹیسٹ میچ‘ صرف 2روز میں جیت گیا

فوٹو: ٹوئٹر

بھارت اور انگلينڈ کے درميان احمد آباد ٹيسٹ میچ 1935 کے بعد پہلی بار صرف دو دن کے اندر ختم ہوگيا۔ بھارت نے 10 وکٹوں سے کاميابی حاصل کرلی۔

بھارت کے احمد آباد کرکٹ اسٹیڈیم میں دو دن ميں 30 وکٹيں گريں، 28 اسپنرز کو مليں، ٹیسٹ میچ میں جيت کیلیے بھارت کھیل ک ہی مذاق بنادیا۔

سابق انگلش کپتان مائيکل وان نے تجويز دی کہ اگر ايسے ہی پچز بنانی ہيں ہر ٹيم کو بيٹنگ کیلیے دو کے بجائے تين اننگز دی جائیں، اسی طرح سابق آسٹريلين کرکٹر مارک وا نے کہا اگر جوروٹ بھی 8 رنز دے کر 5 وکٹيں لے جائے تو پچ سواليہ نشان ہے۔

بھارت کی جيت پر انڈين اسٹار يووراج سنگھ کو ٹوئٹ کرنا پڑا اگر ايسي پچز انيل کمبلے اور ہربھجن سنگھ کو ملتيں تو وہ 1 ہزار کے قريب وکٹيں لے جاتے، يقين سے نہيں کہہ سکتا کہ صرف دو دن ميں ميچ ختم ہونا ٹيسٹ کرکٹ کیلیے کوئی اچھی خبرہے۔

دوسری جانب ڈے اينڈ نائٹ ميچ کے دوسرے دن بھارتی ٹيم صرف 145 رنز پر ڈھير ہوگئی، انگلينڈ کی ٹيم دوبارہ بيٹنگ آئی تو ڈنر سے پہلے فقط 81 رنز پر آل آوٹ ہوگئی۔ 49 رنز کا ہدف بھارت نے بغير کسی نقصان کے حاصل کرليا۔

متعلقہ خبریں