ترکی کاپاکستان سمیت کئی ممالک کےمسافروں پرقرنطینہ کی پابندی عائدکرنےکافیصلہ

ترکی نے پاکستان سمیت کئی ممالک کے مسافروں کی آمد پر لازمی قرنطینہ کرنے کی پابندی عائد کردی ہے۔

جمعرات کو ترجمان دفتر خارجہ زاہد حفیظ نے پریس بریفنگ میں بتایا کہ ترکی نے پاکستان سمیت متعدد ممالک سے آنے والے مسافروں پر 14 دن کی قرنطینہ کی پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ قرنطینہ کے نئے قواعد و ضوابط یکم جون 2021 سے نافذ العمل ہوں گے۔

ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا تھا کہ انقرہ میں پاکستان کا سفارت خانہ اس فیصلے کے بارے میں ترک حکام سے رابطے میں ہے کیوں کہ متعدد پاکستانی استنبول میں پھنس گئے ہیں۔ ان افراد نے ان قواعد و ضوابط کے اعلان سے قبل اپنا سفر شروع کیا تھا۔

ترجمان دفتر خارجہ نے بتایا کہ پاکستانی سفارت خانے کی کوششوں کے باعث ترک حکام نے پاکستانی شہریوں کو ایک دن (یکم جون) کی چھوٹ دی۔

اس کے علاوہ ترک ہوائی اڈے پر ہونے والے پی سی آر ٹیسٹ کے منفی ہونے پر مسافروں کو ترکی میں داخلے کی اجازت دی گئی ہے۔ انقرہ میں پاکستان کا سفارت خانہ قواعد و ضوابط نرم کرنے میں مدد دینے کے لئے ایرپورٹ پر پاکستانی شہریوں کے ساتھ رابطے میں ہے۔ قونصلیٹ جنرل کی ایک ٹیم بھی پاکستانی شہریوں کو ضروری امداد فراہم کرنے کے لئے استنبول ہوائی اڈے پر موجود ہے۔

متعلقہ خبریں