تصاویر: زمین سے آسمان تک ہر جگہ پائے جانے والے سفید البینو جانوروں کی جھلک

23 مئی ، 2021

سپین کے شہر بارسیلونا میں دنیا کا واحد مانے جانے والا گوریلا اپنے پنجرے میں موجود ہے۔ فوٹو: روئٹرز

البینو جانور نایاب ہوتے ہیں اور زمین سے لے کر سمندر تک ہر جگہ پائے جاتے ہیں۔ ان جانوروں میں رنگت (پگمنٹیشن) کی کچھ یا مکمل طور پر کمی ہوتی ہے جس کی وجہ سے ان کی نسل کے دیگر جانوروں کے مقابلے میں البینو جانوروں کی کھال سفید ہوتی ہے۔
نیشنل جیوگرافک کے مطابق البینو جانوروں کی پیدائش کو کچھ ثقافتوں میں مقدس مانا جاتا ہے۔ تاہم تحقیق کے مطابق انہیں جنگل میں گزارا کرنے میں دشواری کا سامنا رہتا ہے۔
خبر رساں ادارے روئٹرز نے ان میں سے کچھ جانوروں کی تصاویر اکھٹی کی ہیں۔

روس کے شہر کازان میں البینو والبی ایک چڑیا گھر میں بیٹھا ہے۔ واضح رہے کہ کچھ جانور البینو اس لیے ہوتے ہیں کیونکہ انہیں اپنے والدین سے ایسی جینز ملتی ہے جس سے ان کے جسم میں میلانن کی پیداوار میں خلل پیدا ہو جاتا ہے۔

پولینڈ میں البینو پینگوئن اپنے دیگر ساتھیوں کے ساتھ موجود ہے۔

جنوب مغربی جاپان میں البینو سانپ رینگ رہے ہیں۔ 

آرجنٹینا کے سمندر میں نایاب البینو وہیل پانی کی سطح پر تیر رہی ہے۔ 

دنیا کا واحد مانے جانے والے البینو اورنجوتن کو انڈونیشیا میں جنگلات میں چھوڑا جارہا ہے۔  

بوگوٹا میں کولمبین البینو مور اپنے پر پھیلائے کھڑا ہے۔ 

تھائی لینڈ میں ننھا البینو کچھوا تیر رہا ہے۔ 

کینیا میں البینو زیبرا اپنی نسل کے دیگر جانوروں کے ساتھ کھڑا ہے۔ 

ملائیشیا کے شہر کوالالمپور میں ایک سمندری مخلوق ایکویریم میں تیر رہی ہے۔

ایک نایاب البینو ڈولفن جنوبی آسٹریلیا کے سمندر میں تیر رہی ہے۔