تیسری جماعت کی طالبہ کا لاہور کے اسکول میں ریپ، پولیس

پولیس کا کہنا ہے کہ لاہور کے علاقے نشتر کالونی کے ایک اسکول میں تیسری جماعت کی طالبہ کو ریپ کا نشانہ بنادیا گیا۔

متاثرہ لڑکی کے اہل خانہ کا کہنا ہے کہ واقعہ 9 روز قبل پیش آیا۔ طالبہ کی والدہ نے بتایا کہ 21 جون کو میری بیٹی اسکول سے صبح 10 بجے واپس آئی اور فوراً بستر میں چلی گئی۔

رپورٹ کے مطابق جب لڑکی سو کر اٹھی تو اس نے اپنے والدین کو بتایا کہ اسکول میں ایک شخص نے اسے ریپ کا نشانہ بنایا۔ تیسری جماعت کی طالبہ کا مزید کہنا تھا کہ اس کے اساتذہ نے اسے دھمکی دی کہ اگر کسی کو بتایا تو اسکول سے نکال دیں گے۔

نشتر کالونی پولیس اسٹیشن میں واقعے کا مقدمہ درج کرلیا گیا جس میں پاکستان پینل کوڈ کی دفعہ 376 (ریپ کی سزا) شامل کی گئی ہے۔

جمعرات کو لڑکی کی میڈیکل رپورٹ میں ریپ کی تصدیق ہوگئی۔

انویسٹی گیشن افسر کے مطابق پولیس نے ایک استاد کو تحقیقات کیلئے حراست میں لے لیا اور واقعے سے متعلق مزید تفتیش جاری ہے۔

متعلقہ خبریں