جوتباہی اوربربادی پاکستان میں ہوئی اس کو آزادکشمیرمیں داخل نہیں ہونےدیں گے،مریم

پاکستان مسلم لیگ کی سینئرنائب صدر مریم نواز نے کہا ہے کہ بچہ بچہ کٹ مرے گا لیکن کشمیر صوبہ نہیں بنے گا۔

جمعہ کو پٹیکا میں پاکستان مسلم لیگ نون کی رہنما مریم نواز نے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان کو کشميريوں کا خون فروخت کرنے کا حق کس نے ديا ہے۔ عمران خان کا وائرس کرونا سے زيادہ خطرناک ہے اور یہ مقبوضہ کشمير کو نگل گيا ہے۔

مريم نواز نے کہا کہ آزاد کشمیر کچھ لوگ لالچ دے کر ووٹ مانگنے آتے ہيں تاہم میں باہر سےنہیں آئی کیوں کہ کشمیرمیرا گھر ہے اور میرے باپ دادا کشمیری ہیں۔

خارجہ پالیسی پر تنقید کرتے ہوئے مریم نوازنےکہا کہ ایک سڑک کا نام  تبدیل کرنا خارجہ پالیسی نہیں ہوتی۔ کشمیر کے سودے کے بعدعوام سے کہا گیا کہ میں نے تو خاموشی اختیارکرلی، عوام بھی دو منٹ کی خاموشی اختیار کرلے، مقبوضہ کشمیر  پر 2منٹ کی خاموشی کیا ڈونلڈ ٹرمپ کی ثالثی تھی۔ اب جب عمران خان ووٹ مانگنے آئے تو پوچھناکہ کشمیرکاسوداکیوں کیا ہے۔

مریم نواز نے پی ٹی آئی حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ جوتباہی اوربربادی کےمناظرپاکستان میں ہیں وہ ہم آزادکشمیرمیں داخل نہیں ہونےدیں گے۔جو سورج پاکستان میں غروب ہو رہا ہے اس کو کشمیر میں طلوع نہیں ہونے دیں گے۔ عمران خان کا نام کشمیر فروش ہے اور وہ کشمیر کو بھارت کی جھولی میں پھینک کر آگیا ہے۔

متعلقہ خبریں