حج کے لیے نہیں جایا جا سکتا، دھوکے بازوں سے بچیں: وزرات مذہبی امور

حکومت پاکستان کی جانب سے شہریوں کو آگاہ کیا گیا ہے کہ سعودی عرب نے پاکستان سمیت دنیا کے کسی ملک سے اس سال عازمین حج کو حجاز مقدس جانے کی اجازت نہیں دی اور نہ ہی کسی قسم کا کوئی حج کوٹہ بحال کیا ہے، اس لیے شہری کسی جعل ساز کے دھوکے میں آنے سے بچیں۔
وزارت مذہبی امور کا کہنا ہے کہ اس کے علم میں آیا ہے کہ کچھ جعل ساز سوشل میڈیا اور دیگر ذرائع سے یہ اعلان کر رہے ہیں کہ سعودی عرب نے پاکستان سے 700 افراد کو حج کرنے کی اجازت دی ہے اور پاکستان کو کوٹہ مل چکا ہے۔
وزارت نے اس حوالے سے جعلی معلومات شیئر کرنے اور سادہ لوح شہریوں کو لوٹنے والوں کے خلاف کارروائی کا عندیہ دے دیا ہے۔
مزید پڑھیں
وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے مشرق وسطیٰ حافظ محمد طاہر اشرفی نے اردو نیوز سے گفتگو میں کہا کہ کچھ لوگ جعلی حج سکیم اور کوٹہ کے بارے میں تشہیر کر رہے ہیں، جن کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔
طاہر اشرفی نے کہا کہ ’سعودی حکومت کا اعلان واضح کہ بیرون ملک سے کسی کو حج کی اجازت نہیں دیں گے اور اس موقع پر اس میں رد و بدل کی کوئی گنجائش نہیں ہے۔‘
انھوں نے کہا کہ جو لوگ ایسی سکیمیں چلا رہے ہیں انہیں یہ نہیں معلوم کہ سعودی عرب کے لےی پروازیں ہی بند ہیں۔
’حج کے نام پر شہریوں لوٹنے کی منصوبہ بندی بذات خود ایک بڑا جرم اور گناہ ہے۔‘
طاہر اشرفی نے کہا کہ ’اگر کوئی ایجنٹ کسی بھی فرد کو کوئی ایسی سکیم بتائے تو اس کے بارے میں وزارت مذہبی امور یا ایف آئی اے کو آگاہ کیا جائے۔ اس حوالے سے متعلقہ اداروں کو ہدایات بھی جاری کر دی گئی ہیں۔‘

پاکستان سمیت دنیا کے کسی ملک سے اس سال عازمین حج کو حجاز مقدس جانے کی اجازت نہیں دی گئی ہے (فوٹو: ایس پی اے)
دوسری جانب حج و عمرہ ایسوسی ایشن کے ترجمان نے اردو نیوز سے گفتگو میں کہا ہے کہ ’وزارت مذہبی امور کے ساتھ رجسڑڈ حج عمرہ ٹور آپریٹرز کی جانب سے ایسی کسی سکیم کے تحت شہریوں کو حج کی پیش کش نہیں کی گئی۔ اگر کوئی بھی رکن ملوث پایا گیا تو اس کے خلاف ایسوسی ایشن خود کاروائی کرے گی۔‘
انھوں نے کہا کہ ’پاکستان آئے ہوئے سعودی کمپنیوں کے مستقل ملازمین کو بحرین، افغانستان، کرغزستان کے راستے سعودی عرب بھجوانے کے حوالے سے کچھ ٹریول ایجنٹس نے ٹکٹ ضرور دیے ہیں اور اس حوالے سے تشہیر بھی کی ہے لیکن حج کے حوالے سے ہماری پالیسی سعودی حکومت کے اعلانات کے عین مطابق ہے۔‘

طاہر محمود اشرفی کا کہنا تھا کہ سعودی عرب کی جانب سے حج کے لیے کسی قسم کا کوٹہ بحال نہیں کیا گیا ہے (فوٹو: سبق)
خیال رہے کہ سعودی حکومت نے مقامی سطح پر جعلی حج سکیمیں متعارف کرانے والوں کے خلاف بھی کارروائی کا اعلان کیا ہے۔ ادارہ پراسیکیوشن نے شہریوں اور مقیم غیرملکیوں کو خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ سوشل میڈیا یا کسی دوسرے پلیٹ فارم پرفرضی حج سکیموں پرتوجہ نہ دی جائے۔ حج کے لیے وزارت کے مخصوص پورٹل کے علاوہ کوئی دوسرا ذریعہ نہیں۔ دھوکے بازوں سے محتاط رہیں تاکہ رقم اور وقت ضائع نہ ہو۔