سیف الملوک جھیل سےغیرقانونی کشتیاں ہٹادی گئیں

کشتیاں تجارتی مقاصدکےلئےاستعمال ہورہی تھیں

سیف الملوک جھیل سے غیر قانونی کشتیاں ہٹادی گئی ہیں۔

شمالی علاقہ جات میں تفریحی مقام ناران میں سطح سمندر سے 10 ہزار سے زائد فٹ کی بلندی پرقدرتی جھیل سیف الملوک کو آلودگی سے بچانے کیلئے کمشنر ہزارہ ڈویژن ریاض محسود کے حکم پرجھیل میں چلنے والی غیر قانونی کشتیوں کے خلاف  آپریشن کیا گیا۔ یہ کشتیاں تجارتی مقاصد کے لئے استعمال ہو رہی تھیں جن کے باعث ماحولیات کو خطرات درپیش تھے۔

اس آپریشن کے دوران کشتیاں قبضے میں لے لی گئیں۔ کارروائی میں تحصیل انتظامیہ،محکمہ ریوینو،کاغان ڈویلپمنٹ اتھارٹی اور وائلڈ لائف کے اہلکاروں نے حصہ لیا۔

قبضے میں لی گئی کشتیاں وائلڈ لائف حکام کے حوالے کردی گئی ہیں۔ان 15 کشتیوں میں 4 ناکارہ کشتیاں بھی شامل ہیں۔ اس سے قبل 18 کشتیوں کے مالکان نےقانونی نوٹس ملنے کے بعد رضاکارانہ طور پر جھیل سے اپنی کشتیاں ہٹادی تھیں۔

متعلقہ خبریں