شہبازشریف کو باہرجانے کی اجازت دینے کے فیصلے پرکڑی تنقید

وفاقی وزیر فواد چوہدری نے شہباز شریف کو باہر جانے کی اجازت دینے کے عدالتی فیصلے پر کڑی تنقید کی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ یہ قانون کے ساتھ مذاق ہے، فیصلے کیخلاف تمام قانونی راستے اختیار کریں گے۔  بابر اعوان نے کہا پاکستان شریف برادران کیلئے اقتدار کی چراگاہ ہے۔

وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کی جانب سے عدالت میں جمع کرائے گئے نواز شریف کی واپسی کی گارنٹی بھی ٹویٹر پر شيئر کی اور لکھا کہ بجائے شہباز شریف کو جعلی گارنٹی دینے پر نوٹس کیا جاتا یا نواز شریف کو واپس بلایا جاتا خود اپوزیشن لیڈر کو باہر بھیجا جارہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اربوں روپے کی منی لانڈرنگ میں ملوث شہباز شریف کو باہر جانے کی اجازت دینا قانون کے ساتھ مذاق ہے، فیصلے کیخلاف تمام قانونی راستے اختیار کریں گے، ہمارے نظام عدل کی کمزوریوں کی وزیر اعظم کئی بار نشاندہی کرچکے ہیں لیکن اپوزیشن اصلاحات پر تیار نہیں۔

واضح رہے کہ لاہور ہائیکورٹ نے قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہباز شريف کو علاج کیلئے بیرون ملک جانے کی اجازت دی ہے، وہ کل (ہفتہ کو) لندن کیلئے روانہ ہوں گے، برطانیہ پہنچنے سے قبل مسلم لیگ ن کے صدر قطر میں 10 روز کیلئے قرنطینہ میں رہیں گے۔

وزیراعظم کے مشیر بابر اعوان نے بھی فیصلے پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف کو مفرور کرانے والے شہباز شریف بھی لندن جارہے ہیں، پاکستان اِن کیلئے اقتدار کی چراگاہ ہے۔

متعلقہ خبریں