شہبازشریف کو خود پر لگے الزامات کاجواب دینا چاہیے، فوادچوہدری

افغانستان میں امن میں حصہ دار ہونگے جنگ میں نہیں

Your browser does not support the video tag.

وفاقی وزير اطلاعات فواد چوہدری کہتے ہيں کہ انہيں توقع تھی کہ شہباز شريف 25 ارب روپے کا جواب ديں گے، ان کے بچوں کے پاس پيسہ کہاں سے آيا؟، اُس کا بتائيں گے، ان سے پيسے کا پوچھو تو کہتے ہيں ہم نے پنجاب کی خدمت کی، ابھی تو بيٹے ہيں، بہت جلد ان کے نواسوں اور پھپھيوں کی بھی جائيداديں سامنے آئيں گی۔

سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کی پریس کانفرنس کے جواب میں وفاقی وفاقی وزیرِاطلاعات و نشریات فواد چوہدری نے حماد اظہر اور شہزاد اکبر کے ہمرا ہ پریس کانفرنس کی، جس میں ان کا کہنا تھا کہ شہباز شریف کو خود پر لگے الزامات کا جواب ایف آئی اے کو دینا چاہئے، توقع تھی کہ شہباز شریف ایف آئی اے میں طلبی والے کیس پر کوئی روشنی ڈالیں گے، جب ان سے پوچھتے ہیں کہ آپ کے اکاؤنٹ سے اتنے پیسے نکلے تو وہ کہتے ہیں میں نے میٹرو بنائی، پنجاب کی خدمت کی۔

وزیر اطلاعات و نشریات کا کہنا ہے کہ کشمیر میں انتخابی مہم چل رہی ہے، تحریکِ انصاف کی پوزیشن مستحکم ہے، دوسری کوئی سیاسی جماعت تمام نشستوں پر امیدوار بھی کھڑے نہیں کرسکی، نون لیگ نے کشمیر کے الیکشن میں دھاندلی کا شور ابھی سے مچانا شروع کردیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ مریم بی بی جو الیکشن مہم چلا رہی ہیں، ان کے پاس کوئی پالیسی نہیں، پیپلز پارٹی اور نون لیگ میں ایک چیز یکساں ہے، جو پیسہ ان کو دیا گیا وہ لندن، دبئی اور فرانس سے برآمد ہوا، عمران خان کا کرپشن کا بیانیہ اس لیے اہم ہے کہ اربوں روپے چوری کرکے باہر لے جائے گئے۔

مزید جانیے: شہبازشریف بتائیں گردشی قرضہ 1200ارب تک کیوں پہنچا؟، حماداظہر

فواد چوہدری کا یہ بھی کہنا ہے کہ نیب اب تک 427 ارب روپے ریکور کرچکا ہے، چیف جسٹس پاکستان سے اپیل ہے کہ ہائی پروفائل کیسوں کی سماعت براہِ راست نشر کی جائے۔

وزیر اطلاعات و نشریات نے کہا کہ افغانستان میں ہم امن میں تو حصے دار ہوں گے لیکن جنگ میں نہیں، وزیرِاعظم عمران خان کے مؤقف کی تمام سیاسی جماعتوں نے حمایت کی۔

متعلقہ خبریں