شہزاداکبرکانام ای سی ایل میں ڈالنےکی قرار دادپنجاب اسمبلی میں جمع

وزیراعظم کےسابق مشیراحتساب شہزاد اکبر کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے مطالبے کی قرارداد پنجاب اسمبلی میں جمع کروادی گئی ہے۔

پنجاب اسمبلی میں یہ قرارداد پاکستان مسلم لیگ (ن) کی رکن سعدیہ تیمور کی جانب سے جمع کرائی گئی۔

قرارداد کا متن ہے کہ شہزاد اکبر پر براڈ شیٹ اسکینڈل میں بڑی رقم وصولی کا الزام ہے، شہزاد اکبر نے احتساب کے نام پرانتقام کو لیڈ کیا۔

متن میں یہ بھی درج ہے کہ شہزاد اکبر کی جانب سے اپوزیشن رہنماﺅں پر بنائے گئے مقدمات جھوٹ کا پلندہ ثابت ہوئے ہیں اور تمام اپوزیشن رہنما عدالتوں سے سرخرو ہوئے ہیں۔

متن میں مطالبہ کیا گیا کہ مشیر احتساب شہزاد اکبر کا نام ای سی ایل میں ڈالا جائے۔

واضح رہےکہ پیر کو مشیر برائے داخلہ واحتساب شہزاد اکبر نے اپنے عہدے سے  استعفیٰ دے دیا اوروزیراعظم عمران خان نے ان کا استعفیٰ منظور کرلیا۔

انھوں نےاستعفیٰ دیتے ہوئے کی گئی ٹوئٹ میں امید ظاہر کی کہ پاکستان تحریک انصاف کے منشور کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں احتساب کا عمل جاری رہے گا۔

شہزاد اکبر نے بطور مشیر، نیب کو صرف ایک شوگر ملز اسکينڈل کا کیس بھیجا۔لاہورہائیکورٹ ہائی کورٹ نے قرار دیا تھا کہ يہ شہزاد اکبر کا اختیار نہیں،تمام کیسز نیب نے خود نوٹس لے کر یا پرائیویٹ شکایات پر بنا رکھے ہيں اورنيب کسی بھی کیس کے پیچھے شہزاد اکبر کا ہاتھ ہونے کو تسلیم نہیں کرتی جبکہ قانون کے مطابق نیب شہزاد اکبر کا ماتحت نہیں ہے۔

تازہ ترین

لاہور: تعلیمی اداروں میں بچوں، اساتذہ کےکرونا ٹیسٹ کرنیکا فیصلہ
خانپور ڈیم میں کشتی الٹ گئی، خاتون ٹیچر جاں بحق
بھارت کا یوم جمہوریہ، کشمیری کل یوم سیاہ منائیں گے
ایکسائزڈیوٹی کی عدم ادائیگی،پی آئی اے کےبینک اکاؤنٹس منجمد