صدر نیشنل بینک کو فوری عہدے سے ہٹانے کا حکم

IHC afp

فوٹو: اے ایف پی

اسلام آباد ہائی کورٹ نے صدر نیشنل بینک عارف عثمانی اور چیئرمین نیشنل بینک زبیر سومرو کو فوری طور پر عہدوں سے ہٹانے کا حکم دے دیا۔

جسٹس محسن اختر کیانی نے صدر نیشنل بینک کی تعیناتی کے خلاف شہری کی درخواست پر 2جون کو محفوظ کیا گیا فیصلہ سنایا۔

عارف عثمانی کی بطور صدر تعیناتی 12 جنوری 2019 کے نوٹیفکیشن کو چیلنج کیا گیا تھا۔

شہری عبدالطیف قریشی نے تعیناتی کو چیلنج کیا تھا۔ درخواست گزار میں مؤقف اپنایا کہ طارق عثمانی کی تعیناتی ٹرانسپرنسی کے تقاضوں کے مطابق نہیں ہوئی۔

درخواست گزار کے مطابق اسٹیٹ بینک کی پروفیشنل بینکرز کی لسٹ میں عارف عثمانی کا نام شامل نہیں اور عارف عثمانی کا نام پروفیشنل بینکرز کی لسٹ میں نہ ہونے کے باوجود تعیناتی کردی گئی۔

درخواست گزار کا کہنا تھا کہ عارف عثمانی بی ایس سی فزکس ہے۔