طالبان کا افغانستان کے 130سے زائد اضلاع پر قبضہ

افغان ملٹری کی 150پوسٹوں پر بھی قبضہ

Your browser does not support the video tag.

افغانستان سے امریکا کے انخلا شروع ہوتے ہی افغان طالبان نے اب تک ملک کے 130 سے زائد اضلاع اور 150 افغان ملٹری پوسٹوں پر قبضہ کرلیا۔

غير ملکی ميڈيا کے مطابق بدخشاں کے ضلع واخان ميں صرف چار طالبان نے پورے ضلع پر کنٹرول کرليا۔ طالبان گاڑی ميں پہنچے تو مقامی لوگوں نے خير مقدمی نعرے لگائے اور ہار پہنائے۔

افغانستان کے ايک تہائی سے زيادہ اضلاع طالبان کے کنٹرول ميں آچکے ہيں۔

افغانستان میں افغان طالبان کا مزید 13اضلاع پر قبضہ

ترجمان طالبان کا کہنا ہے کہ مضبوط ملٹری پوزيشن کے باوجود امن مذاکرات کے ليے سنجيدہ ہيں۔ امن منصوبہ بناليا ہے جو آئندہ ماہ پيش کريں گے۔

دوسری جانب افغانستان ميں امريکا کی عسکری قوت کا مرکز بگرام ايئربيس بھی خالی ہوچکا ہے۔ بگرام کے نئے کمانڈر جنرل مير اسداللہ کوہستانی نے الزام لگايا کہ امريکی فوج رات کی تاريکی ميں کسی کو بتائے بغير چلی گئی۔

بم پروف ديواروں والے ايئربيس ميں بيک وقت 10 ہزار فوجی رہائش رکھ سکتے ہيں۔ بگرام ايئر بيس کا نيا رن وے تقريباً ساڑھے تين کلو میٹر طویل ہے جہاں بڑے کارگو اور بمبار جہاز لینڈ کر سکتے ہیں۔

متعلقہ خبریں