عثمان کاکڑکی موت: بلوچستان اپوزیشن کاتحقیقات سپریم کورٹ سےکروانے کامطالبہ

Usman Kakar

فوٹو: قومی اسمبلی

بلوچستان اسمبلی میں اپوزیشن جماعتوں نے حکومت کی جانب سے بنائے گئے جوڈیشل کمیشن پر عدم اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے سابق سینیٹر عثمان خان کاکڑ کی موت کی تحقیقات سپریم کورٹ سے کروانے کا مطالبہ کر دیا۔

گزشتہ روز بلوچستان اسمبلی کے اجلاس میں پشتونخوامیپ کے رکن اسمبلی نصراللہ زیرے نے سابق سینیٹر عثمان کی موت پر تحریک پیش کرتے ہوئے انہیں خراج عقیدت پیش کیا۔

تحریک پر اظہار خیال کرتے ہوئے انہوں نے حکومت کی جانب سے بنائے گئے جوڈیشل کمیشن پر عدم اعتماد کا اظہار کیا اور عثمان خان کی موت کی تحقیقات سپریم کورٹ سے کروانے کا مطالبہ کیا۔

صوبائی وزیر نور محمد دومڑ نے کہا کہ اپوزیشن کی جانب سے جوڈیشل کمیشن پر عدم اعتماد کرنا عدلیہ کی توہین ہے۔

تحریک پر بحث کے دوران حکومتی اور اپوزیشن ارکان میں تند و تیز جملوں کا تبادلہ ہوا۔ ایوان نے بحث کے بعد تحریک کو متفقہ تعزیتی قرارداد کے طور پر کثرت رائے سے منظور کرلیا۔

ایک ہفتہ قبل وزیراعلیٰ بلوچستان نے پشتونخوا ملی عوامی پارٹی کے رہنماء سینیٹر عثمان کاکڑ کی موت کی عدالتی تحقیقات کرانے کا اعلان کیا تھا۔