عمران خان ڈرامے نہ کریں، استعفیٰ دیں، مولانا فضل الرحمان

پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ عمران خان کے خلاف ایوان نے فیصلہ دیا ہے۔ اب وہ ڈرامے بازی چھوڑ کر استعفیٰ دیں۔

وزیراعظم عمران خان نے سینیٹ انتخابات میں حفیظ شیخ کی شکست کے بعد قومی اسمبلی سے اعتماد کا ووٹ لینے کا فیصلہ کیا ہے۔ شاہ محمود قریشی نے ہنگامی پریس کانفرنس کرتے ہوئے اعلان کیا کہ اعتماد کا ووٹ لینے سے یہ واضح ہوجائے گا کہ کون عمران خان کے ساتھ کھڑا ہے اور کون ن لیگ اور پیپلز پارٹی کے نظریہ کے ساتھ کھڑا ہوتا ہے۔

مولانا فضل الرحمان نے اس پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ عمران خان اقتدار کی اخلاقی حیثیت کھو چکے ہیں۔ ان کے خلاف ايوان نے فيصلہ دے ديا۔ اب وہ ڈرامے بازياں نہ کريں اور مستعفی ہوجائيں۔

قبل ازیں پیپلز پارٹی کے رہنماؤں کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے کہا تھا کہ قومی اسمبلی کا نتیجہ حکومت اوراپوزیشن کی کامیابی کا معیار ٹھہرا تھا۔ اس لیے پوری قوم کی نظریں آج سیںٹ انتخاب پر تھیں۔ اللہ نے جو کامیابی دی اس پر پی ڈی ایم کو مبارک باد دیتا ہوں۔ ہم قوم کیلئے دوبارہ ملک میں عام انتخابات چاہتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان نے ووٹ بھی ضائع کیا اور خود بھی ضائع ہوگئے۔ ان کو یقین کر لینا چاہیے کہ اسمبلیاں تحلیل ہو گئیں۔ جس کو ووٹ ڈالنے کا طریقہ نہیں آتا وہ حکومت کیا کرے گا۔ عمران خان شکست تسلیم کرکےاسمبلیاں تحلیل کریں۔

مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ ہماری کامیابی ثابت کر چکی ہے کہ اڑھائی سال سے ملک میں جعلی حکومت ہے۔ لانگ مارچ کی حکمت عملی پی ڈی ایم سربراہ اجلاس میں طے کریں گے۔

متعلقہ خبریں