فلسطین کے معاملے پربولنےکی ضرورت ہے، شوبزسیلبرٹیز

تصویر: نیمل خاور/انسٹاگرام

مسجد اقصیٰ میں فلسطینی نمازیوں پراسرائیلی فوجیوں کے تشدد کے خلاف سوشل میڈیا پرغم وغصہ پایا جاتا ہے، پاکستانی شوبزستاروں نے بھی معاملے پراپنے غم وغصے کااظہار کیا ہے۔

گذشتہ ہفتے مسجد کے احاطے میں اسرائیلی فوجٓ نے دھاوا بول کر جمعتہ الوداع کی نماز کے لئے جمع ہوئے نمازیوں کو منتشر کرنے کے لیے ربڑ میں لپٹی دھاتی گولیوں کے فائرکیے تھے جس سے 170 سے زائد نمازی زخمی ہوئے۔

حمزہ علی عباسی کی اہلیہ اور سابق اداکارہ نیمل خاور نے لکھا ”تصورکریں یہ آپ کے ساتھ ہورہا ہو، آپ کے بھائی، شوہر، والدہ، بہن اور بچوں کے ساتھ، تو آپ کیسا محسوس کریں گے”۔

تصویر: نیمل خاور/انسٹاگرام

نیمل نے لکھا ” فلسطین کے معاملے پرفوری بولنے کی ضرورت ہے ”

گلوکار عاصم اظہر نے حملے کی مذمت کرتے ہوئے سوال اٹھایا کہ ” دنیا فلسطین میں مظالم کے لئے اسرائیل کو کیوں کچھ نہیں کہہ رہی، آپ عبادت گاہ اور نہتے عبادت گزاروں پر کس طرح حملہ کرسکتے ہیں؟”

اداکار وگلوکارفرحان سعید نے حملے کو دہشتگردی قراردیتے ہوئے لکھا ”بین الاقوامی برادری کس طرح فلسطینیوں پرظلم و ستم کے خلاف خاموش رہ سکتی ہے؟”۔

شاہد آفریدی، سمیع خان اورفیروزخان نے بھی معاملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے آوازاٹھائی۔

وزارت خارجہ پاکستان کی جانب سے جاری کردہ بیان میں حکومت نے کہا ہے کہ اس طرح کے حملے ، خاص طور پر رمضان کے مقدس مہینے کے دوران ، تمام بنیادی انسانی حقوق کے قوانین کے منافی ہیں۔

متعلقہ خبریں