فواد چوہدری کے ’متعصانہ جملے‘: اے آر وائی نیوز کو پیمرا کا نوٹس جاری

چینل کو سات دنوں میں نوٹس کا جواب دینے کا حکم دیا گیا ہے۔ (فائل فوٹو: اے پی پی)

پاکستان الیکٹرانک میڈیا اتھارٹی (پیمرا) نے اے آر وائی نیوز کو ایک پروگرام میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما فواد چوہدری کی جانب سے ’نازیبا‘ اور ’متعصبانہ‘ الفاظ ادا ہونے پر شو کار نوٹس جاری کیا ہے۔
جمعرات کو پیمرا کی جانب سے جاری ہونے والی ایک پریس ریلیز کے مطابق اے آر وائی نیوز کے پروگرام ’آف دا ریکارڈ‘ میں ’نازیبا اور متعصبانہ جملوں و الفاظ‘ نشر ہونے شو کاز نوٹس جاری کیا ہے اور سات دنوں میں جواب جمع کروانے کا حکم دیا گیا ہے۔
مزید پڑھیں
پیمرا کی جانب سے کہا گیا ہے کہ ’متعصبانہ تبصرے پر نہ صرف پروگرام اینکر کا رویہ انتہائی غیرپیشہ ورانہ تھا بلکہ اینکر خود بھی مہمان کے جملوں پر ہنستے رہے جو کہ اینکر کے پیشہ ورانہ کردار اور چینل کی ایڈیٹوریل پالیسی پر بھی کڑا سوالیہ نشانہ ہے۔‘
ٹی وی اور ریڈیو کے نگراں حکومتی ادارے نے مزید کہا ہے کہ ٹی وی چینل کا ’ایڈیٹوریل بورڈ اور مؤثر تاخیری نظام بری طرح ناکام‘ ہوچکا ہے جو کہ پیمرا قوانین اور عدالتی احکامات کی سراسر خلاف ورزی ہے۔
خیال رہے جمعرات کی رات نشر ہونے والے ایک پروگرام میں پی ٹی آئی رہنما فواد چوہدری نے اینکر کاشف عباسی کے پروگرام میں وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) کے سابق ڈائریکٹر جنرل بشیر میمن کے ایک انٹرویو کے حوالے سے ایک سوال پر جواب دیا تھا جسے سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے ’متعصبانہ‘ اور ’نسل پرستانہ‘ قرار دیا گیا تھا۔