فیصل واوڈاکوٹک کیوں دیا؟پی ٹی آئی اراکین نےمخالفت کردی

فائل فوٹو

سینیٹ انتخابات 2021 کیلئے پی ٹی آئی رہنما فیصل واوڈا اور سیف اللہ ابڑو کو سینیٹ کا ٹکٹ دینے پر پی ٹی آئی سندھ کے عہديدار ناراض ہوگئے۔

تحريک انصاف سندھ کے عہدیداروں نے ناراضگی کا اظہار کرتے ہوئے گورنر سندھ کو خط لکھ ديا۔ گورنر کو ارسال کیے گئے خط میں ناراض اراکین کا کہنا تھا کہ فیصل واوڈا ايم اين اے ہیں، انہیں سینیٹ کا امیدوار نہیں ہونا چاہیے۔

خط ميں یہ بھی کہا گيا ہے کہ ٹيکنو کريٹ کی سيٹ پر اميدوار سيف اللہ ابڑو نيب کو مطلوب ہيں۔ 2 سال پہلے ہی پارٹی ميں شريک ہوئے۔

دوسری جانب پی ٹی آئی کے کارکنوں نے سيف اللہ ابڑو کے خلاف سوشل ميڈيا پر مہم شروع کردی ہے، جس ميں سيف اللہ ابڑو کے پی پی رہنماوں کے ساتھ پوسٹر نماياں ہیں۔

معاملات کی نزاکت دیکھتے ہوئے وزير خارجہ اور پارٹی کے چيئرمين شاہ محمود قریشی بھی کراچی پہنچ گئے ہیں۔

سینٹ ٹکٹوں کی تقسیم پر ناراض سندھ کے عہدیداروں نے ائیرپورٹ پر وزیر خارجہ سے ملاقات کی اور ٹکٹوں کی تقسیم پی اپنے تحفظات کا اظہار کيا۔ خط پی ٹی آئی رہنما گل محمد رند کے گھر پر ہونے والی میٹنگ کے بعد لکھا گیا۔

متعلقہ خبریں