لاہور:بھینسوں کومارکر گوشت بیچنےکا کیس، ملزمان کی ضمانتیں کنفرم

Buffalo

فوٹو: سماء ڈیجیٹل

لاہور کی سیشن عدالت نے بھینسوں کو مار کر مردہ جانور کا گوشت بیچنے والے 2 ملزمان کی ضمانتیں کنفرم کر دیں۔

پولیس ایف آئی آر کے مطابق ملزمان محلے داروں کی بھینسوں کو زہریلا انجکشن لگا کر مارتے اور پھر مردہ جانور کا گوشت بیچتے تھے۔ ملزمان نے 32لاکھ روپے کی 23بھینسوں کو زہریلے انجکشن سے مارا۔

ملزمان کے خلاف جانوروں کو مارنے کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا گیا۔ عدالت نے ایف آئی آر میں نامزد ملزمان سنی اسلم اور وحید کی عبوری ضمانتیں کنفرم کیں۔

پراسیکیوٹر نے عدالت کو بتایا کہ ملزمان نے 23 بھینسوں کو زہریلے انجکشن لگا کر قتل کیا لہٰذا عدالت ملزمان کی ضمانتیں خارج کرنے کا حکم دے۔

عدالت نے فریقین کے دلائل سننے اور ریکارڈ کا جائزہ لینے کے بعد عبوری درخواست ضمانت کنفرم کی۔ عدالت نے ایف آٸی آر میں درج دفعات قابل ضمانت ہونے پر درخواست منظور کی۔