لاہور دھماکا: ملزم کی ساتھی خاتون بھی گرفتار

فائل فوٹو

لاہور جوہر ٹاؤن دھماکے کی تفتیش میں گرفتار ملزم ڈیوڈ پال کی نشاندہی پر ساتھی خاتون اور ذاتی ملازم کو بھی قانون نافذ کرنے والے اداروں نے حراست میں لے لیا۔

تفتیشی ذرائع کے مطابق ڈیویڈ پال کی ساتھی خاتون کرن کو لاہور سے حراست میں لیا گیا- دونوں کچھ عرصے سے ڈیویڈ پال سے رابطے میں تھے- دھماکے سے قبل دونوں کی ملاقاتیں مقامی ہوٹل میں ہوتی رہی۔

دھماکے سے کچھ دیر پہلے بھی دونوں ہوٹل میں ملے تھے- گرفتار خاتون کی شناخت کرن کے نام سے کی گئی ہے۔ کرن کے بھائی نے ہی ڈیوڈ کو دھماکے میں استعمال ہونے والی گاڑی خریدنے میں مدد کی۔

دوسری جانب قانون نافذ کرنے والے اداروں نے منڈی بہاؤ الدین میں کارروائی کرتے ہوئے ڈیوڈ کے ذاتی ملازم سجاد کو بھی حراست میں لے لیا ہے-

تحقیقاتی اداروں کے مطابق گاڑی جائے وقوعہ تک لانے والے شخص کی تلاش ابھی جاری ہے۔

حساس اداروں کا اپنی مرتب کردہ رپورٹ میں کہنا ہے کہ لاہور کے علاقے جوہر ٹاؤن میں ہونے والا دھماکا خودکش نہیں تھا بلکہ دھماکا ريموٹ کنٹرول سے کیا گیا تھا۔

رپورٹ میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ دھماکے کی اطلاع دن 11 بج کر 15 منٹ پر ریحان نامی شہری نے دی۔ اب تک کسی بھی دہشت گرد تنظیم نے دھماکے کی ذمہ داری قبول نہیں کی۔ دھماکے میں استعمال بارود کی نوعیت تاحال معلوم نہ سکی۔

دوسری جانب لاہور کے علاقے جوہر ٹاؤن میں ہونے والے دھماکے میں دہشت گردی کیلئے استعمال ہونے والی گاڑی کی تصویر بھی سامنے آگئی۔ تصویر بابو صابو ناکے پر سیف سٹی کیمروں سے حاصل کی گئی۔

ذرائع کا یہ بھی کہنا ہے کہ دھماکے میں استعمال ہونے والی گاڑی 2010ء میں ڈکیتی میں چھینی گئی تھی۔ گاڑی چھیننے کی واردات کا مقدمہ گوجرانوالہ کے تھانہ کینٹ میں درج ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز بدھ 23 جون کو لاہور کے علاقے جوہر ٹاؤن میں دھماکا ہوا تھا جس میں 3 افراد جاں بحق اور 24 زخمی ہوئے تھے۔ دھماکے کا مقدمہ درج کر لیا گیا ہے جبکہ قانون نافذ کرنے والے اداروں نے علاقے کی جیو فینسنگ بھی مکمل کر لی ہے۔

جوہر ٹاؤن میں دھماکے کا مقدمہ 23 جون کی رات تھانہ سی ٹی ڈی میں درج کیا گیا۔ مقدمہ انسپکٹر عابد بیگ کی مدعیت میں درج کیا گیا۔ ایف آئی آر کے متن کے مطابق دہشت گردوں نے کارروائی کیلئے گاڑی اور موٹر سائیکل کا استعمال کیا، قانون نافذ کرنیوالے اداروں نے گاڑی کے مالک کو حافظ آباد سے حراست میں لے لیا۔ گاڑی اوپن لیٹر پر فروخت کی گئی تھی۔

متعلقہ خبریں