لاہور میں ڈینگی کیسز، اسپتالوں میں وارڈز فعال کرنےکی ہدایت

رواں برس لاہور میں 19کیسز رپورٹ ہوئے

لاہور میں رواں برس ڈینگی کے 19 کیسز سامنے آنے کے بعد اسپتالوں کو فوری ڈینگی وارڈز فعال کرنے کی ہدایات جاری کر دی گئیں۔

شہر کے اسپتالوں میں ڈینگی وارڈز بنانے شروع کر دیے گئے اور ڈینگی بخار سے بچاؤ کی ادویات بھی پہنچا دی گئی ہیں جبکہ مشتبہ مریضوں کی رہنمائی کے لیے مخصوص کاؤنٹرز نے کام شروع کر دیا ہے۔

طبی ماہرین کے مطابق کرونا کی طرح ڈینگی کے لیے بھی احتیاطی تدابیر اپنانا ہوں گی۔ ایم ایس میو اسپتال ڈاکٹر محمد افختار نے ہدایت کی ہے کہ گھر میں صاف پانی جمع نہ ہونے دیں اور پورے بازوں والے کپڑے پہنیں۔

صرف جون میں ہی صوبائی دارالحکومت سے تین کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ انتظامیہ نے رواں ماہ گھروں اور کمرشل ایریاز میں پانی جمع ہونے پر 67 ایف آئی آرز درج کی ہیں جبکہ ڈینگی لاروا ملنے والے مقامات سیل کیے جا رہے ہیں۔

اسسٹنٹ کمشنر ماڈل ٹاون ابراہیم ارباب کا کہنا ہے کہ اب ایس او پیز کی خلاف ورزی برداشت نہیں کریں گے اور ایف آئی آرز درج ہوں گی۔

واضح رہے کہ لاہور میں خلاف ورزی کرنے والے ہر گھر کے باہر لال اسٹیکر بھی چسپاں کیے جا رہے ہیں۔

متعلقہ خبریں