مونس الٰہی کو کابینہ میں شامل کرنے کا فیصلہ، ’شہباز گِل کا ویلکم‘

منگل 13 جولائی 2021 19:30

پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے بالآخر تقریباً برس بعد مسلم لیگ ق کے رہنما رکن قومی اسمبلی چوہدری مونس الٰہی کو وفاقی کابینہ میں شامل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔
منگل کے روز وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گِل نے ٹوئٹر پر اس خبر کے ساتھ چوہدری مونس الٰہی کو مینشن کرتے ہوئے ’ویلکم مائی بردر‘ (خوش آمدید میرے بھائی) لکھا۔
اس سے قبل وفاقی کابینہ میں مسلم لیگ ق کے ایک وفاقی وزیر طارق بشیر چیمہ ہیں جن کے پاس ہاؤسنگ کی وزارت ہے۔
مزید پڑھیں
مونس الٰہی کی شمولیت کے بعد وفاقی کابینہ میں مسلم لیگ ق کے ارکان کی تعداد دو ہوجائے گی۔
وہ جولائی 2018 کے عام انتخابات میں گجرات سے قومی اسمبلی کے حلقے این اے 69 سے مسلم لیگ ق کے ٹکٹ پر منتخب ہوئے تھے۔
گذشتہ تین برس کے دوران ان کی وفاقی کابینہ میں شمولیت کے حوالے سے متعدد خبریں سامنے آئیں تاہم وزیراعظم عمران خان نے انہیں اپنی کابینہ میں شامل نہیں کیا۔
یاد رہے کہ چند روز قبل مسلم لیگ ق کے ایک وفد نے سپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الٰہی کی قیادت میں وزیراعظم عمران خان سے اسلام آباد میں ملاقات بھی کی تھی۔
ملاقات میں مسلم لیگ ق کی جانب سے وفاقی وزیر ہاؤسنگ طارق بشیر چیمہ کے علاوہ مونس الٰہی بھی موجود تھے۔
حکومت کی جانب سے وزیراعظم عمران خان کے علاوہ وفاقی وزرا خارجہ شاہ محمود قریشی، شفقت محمود اور اسد عمر اس ملاقات میں شریک ہوئے۔
ملاقات میں تحریک انصاف اور مسلم لیگ ق کے اتحاد، ملک کی سیاسی صورت حال اور آئندہ کی حکمت عملی پر تبادلہ خیال کیا گیا تھا۔