مویشی منڈیوں میں خریداروں اوربیوپاریوں کےدرمیان بھاؤتاؤجاری

جانوروں کی قیمتیں کم نہ ہوسکیں

Your browser does not support the video tag.

عید قرباں نزدیک آنے کے باوجود اسلام آباد کی مویشی منڈیوں میں خریداروں اور بیوپاریوں کے درمیان بھاؤ تاؤ جاری ہے اور جانوروں کی قیمتیں کم نہ ہوسکیں۔

اسلام آباد کی مختلف مویشی منڈیوں میں بھاؤ تاؤ عروج پر ہے۔ ڈیڑھ لاکھ روپے سے15 لاکھ کے درمیان بیل دستیاب ہے جبکہ بکرے کی قیمت 35 ہزارروپے سے ایک لاکھ روپےتک ہے۔ مویشی منڈیوں میں قربانی کے جانوروں کی قیمتیں آسمان سے باتیں کررہی ہیں۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ گزشتہ سال کی نسبت دام دو سے تین گنا بڑھ چکے ہیں اورگھنٹوں بحث و تکرار کے بعد بھی سودا طے نہیں ہوتا ہے۔

بیوپاری کہتے ہیں خریداروں کے شکوے بجا ہیں لیکن ہم بھی جانور گھاٹے میں نہیں بیچ سکتے ہیں۔۔ ان کا کہنا ہے کہ اس سال جانوروں پر خرچہ تقریباً ایک تہائی زیادہ ہوگیا ہے۔گزشتہ سال گندم 1400 روپے تھی اس سال 2000 روپے سے زائد ہے۔

خریداروں کو استطاعت کے مطابق جانور کی تلاش ہے لیکن بیوپاری قیمتیں کم کرنے کے موڈ میں بالکل نہیں ہیں۔

متعلقہ خبریں