میرا گھر ٹوٹ گیا، عامرلیاقت

تازہ ویڈیو نے کئی سوالات اٹھا دیے

 

 

ٹی وی میزبان اور پی ٹی آئی رہنما عامر لیاقت حسین نے مبینہ تیسری شادی سے متعلق تازہ ویڈیو بیان میں کہا ہے کہ اُن کا گھر ٹوٹ گیا ہے، انہوں نے شادی کی دعویدارخاتون ہانیہ کیخلاف توہین مذہب کی دفعات کے تھت مقدمہ درج کروادیا ہے۔

عامر لیاقت نے اپنے انسٹاگرام اکاؤنٹ پرجاری ویڈیومیں طویل کیپشن کے ساتھ اپنی مبینہ تیسری شادی کے حوالے سے خبروں پرشدید ردعمل دیتے ہوئے عدالت جانے کا عندیہ دیا۔

پی ٹی آئی رہنما کے مطابق اس موضوع پر بات کررہا ہوں جس پر بات نہیں کرنا چاہتا تھا ، میں نے بہت تمہتیں سہیں، مجھ پر بہتان لگائے گئے یہاں تک کہ میرا گھر ٹوٹ گیا۔ گالیاں سنیں لیکن خاموش رہا، میری شادی بشریٰ سے ہوئی اور پھرطوبیٰ سے ، اسکے علاوہ کوئی شادی یا نکاح نہیں کیا۔

میری عزت اچھالی گئی لیکن میں نے صبرکا دامن تھام کراس وقت کا انتظارکیا جب اللہ شرکے منہ سے ایسے جملے نکلوائے گا کہ اس کا کردارواضح ہوجائے گا۔

اس موقع پرعامرلیاقت نے ویڈیو میں خود سے تیسری شادی کا دعویٰ کرنے والی ہانیہ کے چند آڈیو میسجزاور یو ٹیوب چینل کو دیے گئے انٹرویو کے ویڈیو کلپس دکھائے جس میں وہ انتہائی نامناسب زبان استعمال کررہی ہیں۔عامر لیاقت نے کہا کہ کسی نے خاتون سے نکاح نامے کی بابت نہیں پوچھا۔

عامرلیاقت نے بتایا کہ  290 سی ( توہین مذہب کی دفعات )کے تحت مقدمہ بھی درج کروادیا ہے۔ سمن جاری ہوگئے ہیں جو آج ہانیہ تک پہنچ جائیں گے۔ اب عدالت فیصلہ کرے گی، میرا اور ہانیہ کا ڈی این سے ٹیسٹ ہوگا کیونکہ حمل گرنا کوئی معمولی بات نہیں ہوتی۔ ان کے والد کو سمجھایا تھا کہ اپنی بیٹی کو سمجھائیں، ہزاروں لڑکیاں سیلیبرٹیزسے محبت کرتی ہیں، تصویر تک سے شادی کرلیتی ہیں تو کیا یہ شادی ہوگئی۔

عامرلیاقت مبینہ تیسری شادی کی خبروں پر بول پڑے

انہوں نے متنبہ کیا کہ ہانیہ کو تیسری بیوی لکھنے والے بھی ہوشیارہوجائیں کیونکہ انہوں نے لفظ مبینہ استعمال نہیں کیا، اب چیف جسٹس فیصلہ کریں گے، آج کے بعد کچھ ہوا تو یہ عدالتی کارروائی میں دخل ہوگا اور سب کو پیش ہونا ہوگا۔ تمام ثبوت عدالت میں پیش کروں گا۔

پی ٹی آئی رہنما نے مزید کہا کہ خاتون نے میری توہین کے ملک، فوج، وزیراعظم سب کیلئے نامناسب زبان استعمال کی۔ عوام اور پوری جماعت کے لیے غلط الفاظ استعمال کیے۔

عامر لیاقت کی اس ویڈیوپرسوشل میڈیا صارفین نے گھرتباہ ہونے والی بات کے تناظرمیں سوالات اٹھائے کہ کیا طوبیٰ سے ان کی علیحدگی ہوچکی ہے؟۔

دوسری جانب طوبیٰ نے عامرلیاقت کے ویڈیو بیان کے بعدانسٹااسٹوریز میں لکھا ‘ اپنی پریشانیاں سوشل میڈیا پر ہرایک کو بتانے کے بجائے اللہ کو بتائیں ‘۔

اس معنی خیز پوسٹ نے سوشل میڈیا پرعامرلیاقت اور طوبیٰ کی شادی سے متعلق پھیلی قیاس آرائیوں کو مزید ہوادی۔

تقریبا 2 ماہ قبل ہانیہ نامی خاتون نے دعویٰ کیا تھا کہ وہ عامرلیاقت کی تیسری بیوی ہیں، لیکن ان پرطوبیٰ اورعامرنے مل کا کالا جادوکروایا جس سے ان کی بولنے کی صلاحیت چلی گئی تھی اور وہ گزشتہ ایک سال سے علاج کروارہی ہیں اور اب کچھ بہترہوئی ہیں۔اس کے بعد سے ہانیہ اکثروبیشتر سوشل میڈیا پرآکر عامرلیاقت اور ان کی اہلیہ کے خلاف بات کرتی رہی ہیں۔

طوبیٰ سےعامرلیاقت کی شادی کی خبر جولائی 2018 میں منظر عام پرآئی تھی جب عام انتخابات کے لیے کاغذات نامزدگی جمع کرانے کے دوران عامرلیاقت نے دوسری شادی کا اعتراف کیا تھا۔ اس سے قبل یہ شادی خفیہ رکھی گئی تھی۔

عامرلیاقت نے سوشل میڈیا پرگردش کرتی خبروں کے باوجود دوسری شادی کی باقاعدہ تصدیق دسمبر 2018 میں کی تھی ۔ 49 سالہ عامر کی دوسری اہلیہ ان سے عمرمیں کافی چھوٹی ہیں جس پر انہیں خاصی تنقید کا نشانہ بھی بنایا گیا تھا۔

سابقہ اہلیہ بشریٰ اقبال سے عامرلیاقت کے 2بچے ہیں۔ سیدہ بشریٰ اقبال بھی اسکالراوردرس وتدریس سے وابستہ ہیں ، اپنا یوٹیوب چینل چلانے کے علاوہ وہ رمضان ٹرانسمیشن کی میزبانی بھی کرچکی ہیں۔

متعلقہ خبریں