نواز،مریم،صفدرکی اپیلوں پر سماعت کا تحریری حکم نامہ جاری

 

اسلام آباد ہائیکورٹ نے نواز شریف ،مریم نواز، کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کی اپیلوں پر سماعت کا تحریری حکم نامہ جاری کردیا ہے۔

اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس عامرفاروق اور جسٹس محسن اختر کیانی نےحکم نامہ جاری کیا۔

حکم نامہ میں بتایا گیا ہے کہ کمرہ عدالت میں موجود ایڈووکیٹ اعظم نذیر تارڑ عدالت کے بلانے پر روسٹرم پر آئے توعدالت نے نوازشریف کے اشتہاری ہوجانے کے بعد اِن کی اپیلوں سے متعلق استفسار کیا۔ عدالت نے پوچھا کہ نوازشریف کی عدم موجودگی میں اپیلیں کیسے آگے بڑھائی جائیں۔اس موقع پر اعظم نذیرتارڑ نے ابتدائی طور پر 2 قسم کے دلائل عدالت کے سامنے رکھے اور کہا کہ نوازشریف کی اپیل عدم پیروی پریامسترد کردی جائے یا التواء میں رکھی جائے۔

 حکم نامے میں بتایا گیا کہ اعظم نذیر تارڑ نے مزید کہا کہ مستقبل میں نوازشریف چاہیں تو سرنڈر کرنے کے بعد اپنی اپیل بحال کراسکتے ہیں۔اعظم نذیرتارڑ نےعدالتی نظیریں پیش کرنے کے لئے عدالت سے کچھ وقت مانگاہے۔

ایڈیشنل پراسیکیوٹرجنرل نیب جہانزیب بھروانہ نے کہا کہ نوازشریف کی اپیل مسترد کی جائے۔ نیب نے دلائل میں کہا کہ نوازشریف کی اپیل میرٹ پرمسترد کی جائے۔ نیب پراسیکیوٹر کی عدالتی نظیروں کو مدنظر رکھ کرعدالتی معاونت کے لئے مہلت کی استدعا منظور کرلی گئی۔

حکم نامے کے مطابق نوازشریف، مریم نواز، کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کی اپیلوں پرآئندہ سماعت 9 جون کو ہوگی۔

ایون فیلڈ ریفرنس میں سزا کے خلاف نوازشریف،مریم نواز،کیپٹن صفدر نے اپیل دائر کر رکھی ہے۔ العزیزیہ ریفرنس میں بھی نواز شریف نے سزا کے خلاف اپیل دائر کی ہوئی ہے۔

اس کےعلاوہ نیب نےایون فیلڈ اورالعزیزیہ ریفرنس میں سزا بڑھانے جبکہ فلیگ شپ ریفرنس میں بریت کے خلاف اپیل کی ہے۔

متعلقہ خبریں