نیاپاکستان ہاؤسنگ سے دیہاڑی دار طبقہ بھی فائدہ اٹھا سکتاہے

پراکسی اینڈ اسیٹس ماڈل تیار کیا جا رہا ہے

ملک میں دیہاڑی دار طبقے کے لیے ایک نیا موڈل تیار کیا جا رہا ہے تاکہ ایسے افراد بھی نیا پاکستان ہاؤسنگ اسکیم کے تحت اپنا گھر بنا سکیں۔

پروگرام نیا دن میں گفتگو کرتے ہوئے ترجمان نیا پاکستان ہاؤسنگ اینڈ ڈویلپمنٹ اتھارٹی (این اے پی ایچ ڈی اے) عاصم شوکت علی نے بتایا کہ وزیراعظم عمران خان اور نیفڈا کو اس حوالے سے کافی تشویش تھی کہ ایسے طبقے کو کس طرح اسکیم میں شامل کیا جائے۔

ترجمان نیفڈا نے بتایا کہ دیہاڑی دار طبقے کے لیے ”پراکسی اینڈ ایسٹس ماڈل” تیار کیا جا رہا ہے یعنی ایسے افراد جن کے بینک اکاؤنٹ نہیں ہیں یا ان میں ماہانہ آمدنی نہیں آرہی انکے لیے دو تین چیزیں پراکسیس کی صورت میں جمع کی جائیں گی۔

مثال کے طور پر اگر وہ کسی گھر میں رہتے ہیں تو انکے گھر کا کرایہ دیکھا جائے گا، بجلی اور دیگر بلوں کا جائزہ لیا جائے گا، بچوں کی اسکولوں کی فیسوں کا جائزہ لیا جائے گا، موبائل ٹیلی کام ریچارج بھی دیکھا جائے گا اور وراثتی زمین کو بنیاد بنا کر قرضہ دیا جا سکتا ہے۔

متعلقہ خبریں