وزیراعظم کو فون کرنیوالی خاتون کا مسئلہ حل ہوگیا

Imran Khan

وزیراعظم عمران خان کو فون پر ایس ایس پی کے بھائی کے بارے شکایت کرنيوالی خاتون  کا مسئلہ حل ہوگيا۔ سی سی پی او لاہور نے خاتون کو رقم واپس  دلوا دی۔

وزیراعظم عمران خان کو گزشتہ روز لاہور کی ایک خاتون نے فون کرکے ایس ایس پی ذیشان اصغر کے بھائی سے متعلق شکايت کی تھی، جس میں خاتون نے عمران اصغر پر گھر میں توڑ پھوڑ اور کرائے کی مد میں 5 لاکھ روپے دعویٰ کیا تھا۔

وزیراعظم سے شکایت کے بعد سی سی پی او لاہور نے خاتون کو کرائے کی رقم واپس دلوادی۔

خاتون نے اس سے قبل تھانے میں درخواست دی تھی لیکن عمران اصغر نے عدالت سے حکم امتناعی لے لیا تھا۔

پنجاب پولیس کی جانب سے ٹویٹر پیغام جاری کیا گیا ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ وزیراعظم سے شکایت کے بعد خاتون کو 4 لاکھ 72 ہزار روپے کی واجب الادا رقم ادا کی جاچکی ہے جبکہ ملزم کی جانب سے خاتون کیخلاف درج کرایا گیا مقدمہ بھی واپس لے لیا گیا ہے، یہ مسئلہ مکمل طور پر حل ہوگیا۔

وزیراعظم کی مداخلت کے بعد مسئلہ حل ہونے اور پنجاب پولیس کی جانب سے معاملے کو طول دینے پر شہریوں کی جانب سے ٹویٹر پر شدید رد عمل ظاہر کیا جارہا ہے۔

ایک شہری نے لکھا کہ اب سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ اگر وہ خاتون وزیراعظم کو نا بتاتی تو اس کیس کو حل ہونے میں پولیس کو کتنی صدیاں درکار تھیں؟، ایسے کتنے کیسز جو پولیس چاہے تو منٹوں میں حل ہوسکتے ہیں لیکن عوام خوار ہو رہے ہیں، اس کیس کے بعد پنجاب پولیس کو اپنے آپ کو احتساب کیلئے پیش کرنا چاہئے۔

متعلقہ خبریں