وزیرخارجہ کی کالعدم تحریک طالبان پاکستان کومعافی کی مشروط پیشکش

فوٹو: ٹوئٹر

وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) کو معافی کی مشروط پیشکش کردی۔

وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے اپنے بیان میں کہا کہ تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) دہشت گردی میں ملوث نہ ہونے کا وعدہ کرے اور پاکستان کا آئین تسلیم کرے تو پاکستان انھیں معافی دینے پر غور کرنے کے لیے تیار ہے۔

ڈٓان نيوز کو انٹرويو دیتے ہوئے وزيرخارجہ شاہ محمود قريشی کا کہنا تھا ہم اشرف غنی حکومت کو مسلسل کالعدم ٹی ٹی پی کے ٹھکانوں کی نشاندہی کرتے رہے لیکن انھوں نے کوئی ایکشن نہ لیا، اب ہم دیکھ رہے ہیں کہ طالبان ان کے خلاف کیا ایکشن لیتے ہیں۔

Govt open to pardon for TTP members if they give up terror activities, surrender: FM Qureshi - Islamabad Post

انہوں نے کہا کہ ہميں تحفظات ہيں کيوں کہ ٹی ٹی پی کو کنٹرول کرنے والے سرحد پار ہيں، اگر وہ اُن سے بات کريں اور وہ قائل ہوجاتے ہيں کہ وہ قانون ہاتھ ميں نہيں ليں گے، دہشت گرد سرگرميوں ميں ملوث نہيں ہوں گے اور حکومتی رٹ چیلنج کرنے کی کوشش نہیں کرینگے تو ہم اُنہيں معافی دينے پر غور کرسکتے ہيں۔

شاہ محمود نے مزید کہا کہ طالبان کا اپنی سرزمین کسی ملک کے خلاف استعمال نہ ہونے کا اعلان خوش آئند ہے۔

تازہ ترین

لوئر دیر: جنازے میں فائرنگ سے 6 افراد جاں بحق، 17 زخمی
پیٹرول کی قیمتوں میں اضافےکےبعد عمران خان اپوزیشن کےنشانےپر
فوادچوہدری اور اعظم سواتی کو الیکشن کمیشن کا نوٹس
وزیرخارجہ کی کالعدم تحریک طالبان پاکستان کومعافی کی مشروط پیشکش