ٹوکیواولمپکس: ویمنزفٹبال کوارٹر فائنل مرحلے میں داخل

بشکریہ اے ایف پی

ٹوکیو اولمپکس 2020 میں ویمنز فٹبال ایونٹس دلچسپ، سنسنی خیز اور اپ سیٹ مقابلوں کے بعد  ناک آؤٹ مرحلے میں داخل ہوگیا۔ اولمپکس میں پہلی بار شرکت کرنے والی ٹیموں نے بھی اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا جبکہ کئی خواتین فٹبالرز نے انتہائی شاندار کھیل پیش کیا اور ان کی کارکردگی مثالی رہی۔

ویمنز فٹبال ورلڈ چیمپئن امریکہ کو اپنے پہلے ہی میچ میں سویڈن کے ہاتھوں شکست کا سامنا کرنا پڑا تاہم امریکی ٹیم  اگلے مرحلے میں پہنچ گئی۔ ویمنزفٹبال ایونٹ کے چاروں کوارٹر فائنلز 30 جولائی کو چار مختلف شہروں میں کھیلے جائیں گے۔  ویمنز فٹبال ایونٹ میں شریک 12 ملکوں کو 3 گروپوں میں تقسیم کیا گیا تھا۔ ہر گروپ سے دو ٹاپ ٹیموں نے کوارٹر فائنل مرحلے کیلئے کوالیفائی کیا جبکہ ہرگروپ میں تیسرے نمبر پر آنے والی  ٹیموں میں سے دو بہترین کارکردگی والی ٹیمیں بھی  ناک آؤٹ مرحلے میں جگہ بنانے میں کامیاب ہوئیں۔ گروپ ای سے برطانیہ، کینیڈا، گروپ ایف سے ہالینڈ،  برازیل، گروپ جی سے اولمپک رنرز اپ سویڈن اور امریکہ نے اگلے مرحلے میں رسائی کی جبکہ تیسرے نمبر پر آنے والی  دو ٹیمیں میزبان جاپان اور آسٹریلیا بھی بہتر کارکردگی کی بنیاد پر کوارٹر فائنل میں پہنچ گئیں۔

ریو اولمپکس میں ویمنز ایونٹ میں گولڈ میڈل جیتنے والی جرمن ویمنز ٹیم  ٹوکیوگیمز کے لیے کوالیفائی کرنے میں ناکام رہی تھی جبکہ 2016 کے اولمپک گیمز میں حصہ لینے والے دیگر چار ممالک فرانس، کولمبیا، جنوبی افریقہ اور زمبابوے کی ویمنز ٹیمیں بھی ٹوکیو اولمپکس میں موجود نہیں ہیں۔ اس بار میزبان جاپان، برطانیہ، چلی، زیمبیا اور ہالینڈ کی ویمنز فٹبال ٹیمیں  ٹوکیو اولمپکس میں جگہ بنانے میں کامیاب ہوئی تھیں۔

ویمنز فٹبال کوارٹر فائنلز میں 30 اگست کو کاشیما میں برطانیہ کا مقابلہ آسٹریلیا سے ہو گا جبکہ سائٹاما میں سویڈن کے مدمقابل میزبان جاپان کی ٹیم ہو گی۔ یوکوہاما میں ہالینڈ کی ٹیم امریکہ سے میچ کھیلے گی جبکہ ریفو میں برازیل کا سامنا کینیڈا سے ہو گا۔ سیمی فائنل میچ 2 اگست کو  یوکوہاما  اور کاشیما میں کھیلے جائیں گے۔ سیمی فائنل میں شکست سے دوچار ہونے والی ٹیمیں کانسی کے تمغے کیلئے 5 اگست کو کاشیما میں مد مقابل ہوں گی۔ گولڈ میڈل کیلئے ویمنز فٹبال  فائنل میچ 6 اگست کو ٹوکیو میں کھیلا جائے گا۔

اولمپکس تاریخ میں دوسری مرتبہ فٹبال ایونٹ میں کوالیفائی کرنے والی برطانوی ویمنز ٹیم نے گروپ ای میں اپنے پہلے میچ میں چلی کو 2-0 سے شکست دے کر اچھا آغاز کیا۔ اگلے میچ میں  برطانوی فٹبالرز نے میزبان جاپان کو 1-0 سے زیرکیا جبکہ  انگلینڈ کا آخری میچ کینیڈا سے 1-1 سے برابر رہا۔ جاپان کوکینیڈا کا میچ بھی ایک ایک گول سے ڈرا ہوا  تاہم کینیڈا کی ٹیم چلی کو 2-1 سے زیرکرنے میں کامیاب رہی۔ جاپان نے چلی کو 1-0 سے شکست دی۔ اس گروپ میں برطانیہ پہلے اور کینیڈا دوسرے نمبر پر رہا۔ جاپان چار پوانٹس کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہا جبکہ چلی کی ٹیم کوئی پوائنٹس حاصل نہیں کر پائی۔ چلی نے پہلی باراولمپکس ویمنز فٹبال کیلئے کوالیفائی کیا تھا۔

گروپ ایف میں شامل برازیلین ٹیم کو اولمپکس ویمنز فٹبال کے تمام ایونٹس میں کوالیفائی کرنے کا اعزاز حاصل ہے لیکن یہ ٹیم اب تک گولڈ میڈل جیتنے میں کامیاب نہیں ہو سکی۔  برازیلین ٹیم دو مرتبہ رنرز اپ اور تین  بار چوتھے نمبر پر رہی  جبکہ ایک مرتبہ کوارٹر فائنلمیں شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ اپنی سر زمین پر ہونے والے ریو اولمپکس میں برازیلین ویمنز فٹبالرز کو  کانسی کے  تمغے کیلئے میچ میں کینیڈا کے ہاتھوں 2-1 سے شکست ہوئی تھی۔ اس باربرازیلین ٹیم کو ہاٹ فیورٹ قرار دیا جارہا ہے۔ برازیلین ٹیم نے اولمپکس کا آغاز چین کے خلاف 5-0 سے کامیابی حاصل کرکے شاندارانداز میں کیا جس میں پانچواں اولمپک کھیلنے والی اسٹار فٹبالر مارٹا نے دو گول کیے۔

اولمپکس میں پہلی بار کولیفائی کرنے والی ہالینڈ کی ٹیم نے شاندار کاکردگی کا مظاہرہ کیا ہے جس نے پہلی بار اولمپکس فٹبال میں شرکت کرنے والے ملک زیمبیا کو 10-3 کے بڑے مارجن سے شکست دی۔ اس میچ میں دو ہیٹ ٹرک ہوئیں۔  زیمبیا کی جانب سے تینوں گول ان کی اسٹار فارورڈ  باربرا بانڈا نے کیے جبکہ ڈچ کھلاڑی میڈیما نے ہیٹ ٹرک سمیت چار گول کیے۔ مارٹینزنے دو اور  وان ڈر سینڈن‘ رورڈ‘ بیرنسٹین‘پبلووا نے ایک ایک گول کیا۔ چین اور زیمبیا کا میچ چار چار گول سے برابر رہا جس میں چین کے چاروں گول وانگ شوانگ نے کیے جبکہ زیمبیا کی باربرا بانڈا نے تین گول کر کے اپنی دوسری ہیٹ ٹرک کی۔ زیمبیا کا چوتھا گول راکیل کونڈا نانجی نے کیا۔  ڈچ   فٹبالرز نے چین کے خلاف میچ میں بھی گولزکی بھرمار کر دی اور میچ 8-2 کے مارجن سے جیت لیا جس میں بیرنسٹین‘ میڈیما اور مارٹینز کے دو دوگول شامل تھے۔ زیمبیا کی ٹیم نے برازیل کے خلاف شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا جس کی وجہ سے باصلاحیت فٹبالرز پر مشتمل برازیلین ٹیم 1-0 سے کامیابی حاصل کر پائی۔ برازیل کی جانب سے واحد گول کھیل کے 19 ویں منٹ میں اینڈریسا نے کیا تھا۔  اس گروپ میں ہالینڈ پہلے اوربرازیل دوسرے نمبر پر رہا۔

گروپ جی میں ریو اولمپکس کی رنرز اپ اور عالمی نمبر 5 سویڈش ٹیم نے ویمنز  فٹبال ورلڈ  چیمپئن امریکہ کو 3-0 سے ہرا کر تہلکہ مچا دیا۔ امریکی ویمنز فٹبال ٹیم کو ورلڈ کپ اور اولمپکس میں بالادستی حاصل ہے اور سویڈن کے ہاتھوں یہ شکست امریکہ کے  لیے بڑا اپ سیٹ تھا۔ امریکی ویمنز فٹبال ٹیم اس وقت عالمی نمبرایک ہے جس نے 4 مرتبہ ورلڈ کپ اور چار بار اولمپک گولڈ میڈلز جیتے ہیں اور ایک بار اولمپکس میں سلور میڈل حاصل کیا جبکہ ریو اولمپکس میں امریکی ٹیم پانچویں نمبر پر رہی تھی جو اولمپکس کی تاریخ میں اس کی پست ترین کارکردگی تھی۔ ریو اولمپکس کے کوارٹر فائنل میں سویڈن نے ہی امریکہ کو پنالٹی ککس پر 4-3 سے زیر کیا تھا۔

سویڈن کے ہاتھوں اس ناکامی کے ساتھ ہی امریکی خواتین فٹبال ٹیم کے 44 میچوں میں ناقابل شکست رہنے کا تسلسل بھی ٹوٹ گیا۔ امریکہ کو آخری مرتبہ سن 2019  میں فرانس نے ہرایا تھا جبکہ اولمپک ابتدائی راؤنڈ میں امریکی ٹیم سن 2008 کے بعد پہلی مرتبہ شکست سے دوچارہوئی تھی جب ناروے کی ویمنز ٹیم نے بیجنگ اولمپکس میں ابتدائی راؤنڈ میں امریکہ کے خلاف کامیابی حاصل کی تھی۔

گروپ جی میں آسٹزیلیا نے نیوزی لینڈ کو 2-1 سے زیر کیا جبکہ اگلے میچ میں آسٹریلیا کو سویڈن کے ہاتھوں 4-2 سے شکست کی ہزیمت اٹھانا پڑی۔ سویڈن سے ہارنے کے بعد اگلے راؤنڈ میچ میں امریکی ٹیم نے نیوزی لینڈ کے خلاف غیر معمولی کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے 6-1 کے مارجن سے کامیابی حاصل کی جس میں نیوزی لینڈ کی فٹبالرز کے دو اون گول بھی شامل تھے۔ آخری گروپ میچ میں سویڈن  نے نیوزی لینڈ کو  بآسانی 2-0 سے شکست دے کر گروپ میں ٹاپ پوزیشن حاصل کی جبکہ امریکہ ٹیم اور آسٹریلیا کا میچ  بغیر کسی گول کے برابر رہا۔ دونوں کے چار چار پوائنٹس تھے لیکن امریکی ٹیم بہترگول اوسط کی بنیاد پر دوسرے نمبر پر رہی۔

ویمنز ایونٹ کے ابتدائی راؤنڈ میں کھیلے جانے والے 18 میچوں میں 75 گول ہوئے ہیں۔ ہالینڈ کی اسٹار فارورڈ  ویویانی میڈیما  8 گول کے ساتھ ٹاپ اسکورر ہیں جبکہ زیمبیا کی باربرا بانڈا چھ گول کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہیں۔ بانڈا نے دو ہیٹ ٹرک کی ہیں۔ چین کی وانگ شوانگ اور ہالینڈ کی مارٹینز نے چار چار گول  جبکہ برازیلین فارورڈ مارٹا، آسٹریلیا کی سمانتھا کیر، سویں ن کی سٹینا بلیک سٹینیئس، برطانیہ کی ایلین ٹونی وائٹ اور ڈچ بیرنسٹین نے تین تین گول کیے ہیں۔

 ہالینڈ سے تعلق رکھنے والی 25 سالہ اسٹرائیکر ویویانی میڈیما نے ٹوکیو اولمپکس میں 8 گول کرکے نیا اولمپک ریکارڈ قائم کردیا۔ اس سے قبل کینیڈا  کی  فٹبالرکرسٹین سنکلیئر نے سن 2012 کے لندن اولمپکس میں 6 گول کرکے ریکارڈ قائم کیا تھا۔ ویویانی میڈیما گول کرنے کی زبردست صلاحیت رکھتی ہیں اور انہیں ہالینڈ کی جانب سے مینز اور ومینز دونوں میں سب سے زیادہ انٹرنیشنل گول کرنے کا اعزاز بھی حاصل ہے۔ زیمبیا کی 21 سالہ باربرا بانڈا اولمپکس اور ایک فٹبال ٹورنامنٹ میں دو ہیٹ ٹرک کرنے والی پہلی فٹبالر بن گئی ہیں۔

متعلقہ خبریں