ٹی 20 سیریز کا فیصلہ کن میچ: پاکستان کی جنوبی افریقہ کو پہلے بیٹنگ کی دعوت

پاکستان اور جنوبی افریقہ کے درمیان ٹی 20 سیریز کا فیصلہ کن میچ  قذافی سٹیڈیم لاہور میں شروع ہو گیا ہے جس میں جنوبی افریقہ کی ٹیم پہلے بیٹنگ کر رہی ہے۔
پاکستان کی ٹیم کے کپتان بابر اعظم نے ٹاس جیت کر جنوبی افریقہ کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی۔
جنوبی افریقہ کی جانب سے ریزا ہینڈریکس اور ملن نے اننگز کا آغاز کیا اور اب سے کچھ دیر پہلے 6 وکٹوں کے نقصان پر 61 رنز بنائے تھے۔
آؤٹ ہونے والے بلے باز ریزا ہینڈریکس تھے جنھیں محمد نواز نے بولڈ کیا۔ محمد نواز کی گیند پر جے جے سمٹس باؤنڈری لگانے کی کوشش میں ایک رن بنا کر کیچ آؤٹ ہو گئے۔
حسن علی کے اوور میں  پائٹ وین بلجو نے لگاتار تین چوکے لگائے لیکن اوور کی آخری گیند پر بولڈ ہو گئے۔ اس سے اگلے ہی اوور میں پہلا ٹی 20 میچ کھیلنے والے زاہد محمود نے ہینرک کلاسن کو کیچ آؤٹ کر دیا۔
 زاہد محمود نے اگلی ہی گیند پر اوپنر ملن کو ایل بی ڈبلیو کر دیا۔  اس سے اگلے اوور میں سپنر عثمان قادر نے فیلوکواو کو کیچ آؤٹ کر دیا۔
پاکستان کی ٹیم میں تین تبدیلیاں کی گئی ہیں۔ خوشدل شاہ، افتخار احمد اور حارث رؤف کی جگہ ٹیم میں آصف علی، حسن علی اور زاہد محمود کو شامل کیا گیا ہے۔

جنوبی افریقہ کے اوپنر ریزا ہینڈریکس نے گذشتہ دونوں میچز میں عمدہ کھیل پیش کیا لیکن تیسرے میچ میں جلد آؤٹ ہو گئے: فوٹو اے ایف پی
پاکستان اور جنوبی افریقہ کے درمیان ٹی ٹوئنٹی سیریز کا پہلا میچ میزبان ٹیم نے 3 رنز سے اپنے نام کیا تھا جبکہ دوسرے ٹی 20 میچ میں جنوبی افریقہ نے پاکستان کو 6 وکٹوں سے شکست دے کر سیریز برابر کی۔  
دونوں ٹی 20 میچز میں پاکستان کی جانب سے وکٹ کیپر بیٹسمین محمد رضوان کے علاوہ کوئی بلے باز خاطر خواہ کارکردگی کا مظاہرہ نہیں کر سکا۔
پاکستان کی ٹیم کے کپتان بابر اعظم خلاف توقع دونوں میچز میں اب تک 5 رنز ہی بنا سکے ہیں، پہلے میچ میں وہ بغیر کھاتا کھولے رن آوٹ ہوئے جبکہ دوسرے میچ میں صرف 5 رنز بنا کر پولین لوٹ گئے۔ 
پاکستان کی ٹیم میں شامل حیدر علی، حسین طلعت، خوشدل شاہ اور افتخار احمد کی جانب سے دونوں میچز میں اب تک مایوس کن کارکردگی دکھائی گئی ہے جس کے بعد سیریز کے فیصلہ کن میچ میں پاکستان کی ٹیم میں تین تبدیلیاں کی گئی ہیں۔
مزید پڑھیں
پاکستان ٹیم میں وکٹ کیپر محمد رضوان اور فہیم اشرف کے علاوہ اب تک سیریز میں کوئی بھی بلے باز حوصلہ افزا کھیل نہیں پیش کر سکے ہیں جبکہ پاکستان کی بالنگ لائن بھی بکھری نظر آئی ہے۔  
ٹی 20 سپیشلسٹ کے طور پر ٹیم میں شامل کیے گئے حارث روف نے دو میچز میں اب تک 6 اوورز میں 70 رنز دے کر دو وکٹیں حاصل کی ہیں جبکہ شاہین آفریدی 7 اوورز میں 55 رنز دے کر صرف دو وکٹیں لینے میں کامیاب ہوئے۔ 
دونوں میچز میں پاکستان کی جانب سے مجموعی طور سپن بولنگ کے شعبے میں محمد نواز اور عثمان قادر نے قدرے بہتر کھیل کا مظاہرہ کیا ہے۔  
جنوبی افریقہ کے اوپنر ریزا ہینڈریکس نے دونوں میچز میں عمدہ کھیل پیش کیا اور وہ دو میچز میں مجموعی طور پر 96 رنز سکور کر چکے ہیں ۔

وکٹ کیپر بیٹسمین محمد رضوان کے علاوہ کوئی بلے باز خاطر خواہ کارکردگی کا مظاہر نہیں کر سکا: فوٹو: اے ایف پی
دوسرے ٹی 20 میچ میں تیز گیند باز ڈیوائن پریٹوریس نے جنوبی افریقہ کی جانب سے ٹی 20 میچ میں بہترین بولنگ کا ریکارڈ توڑتے ہوئے 17 رنز کے عوض  5 وکٹیں حاصل کر کے مہمان ٹیم کی فتح میں اہم کردار ادا کیا۔  
دونوں ٹیموں کے درمیان اب تک 17 ٹی 20 میچز کھیلے گئے جس میں جنوبی افریقہ کا پلڑہ بھاری رہا ہے۔
9 میچز جنوبی افریقہ اور 7 میچز پاکستان نے اپنے نام کیے جبکہ ایک میچ بارش سے متاثر ہوا۔   
مجموعی طور پر پاکستان اور جنوبی افریقہ کے درمیان 6 ٹی 20 سیریز کھیلی گئیں جس میں جنوبی افریقہ چار اور ایک پاکستان کے نام رہی، جبکہ ایک سیریز ایک ایک سے برابر رہی ہے۔