پاکستانی ڈرامہ انڈسٹری کاایک روشن باب بند،انوراقبال نہیں رہے

پاکستان کے ویٹرن اور معروف اداکار انور اقبال کچھ عرصہ شدید علیل رہنے کے بعد جمعرات کو کراچی میں  انتقال کرگئے۔

انور اقبال بلوچ کے اہل خانہ نے ان کے انتقال کی تصدیق کردی ہے۔ انور اقبال کی طبعیت ناساز تھی اور وہ کئی روز سے مقامی اسپتال میں زیر علاج تھے۔ان کی نمازِجنازہ بعد نمازعشاء بيت المکرم مسجد ميں ادا کی جائےگی اور ان کی تدفين ميوہ شاہ قبرستان ميں ہوگی۔ان کے اہلخانہ نے تمام لوگوں سے ان کی صحت یابی کے لیے دعا کی درخواست کی تھی۔

ویٹرن اداکار کی بیٹی نے سماء کو بتایا تھا کہ ان کے والد گیسٹرو کی تکلیف میں مبتلا ہیں تاہم ڈاکٹر نے انور اقبال سے ملاقات پر پابندی عائد کی ہوئی تھی۔

انوراقبال کی سوشل میڈیا پر کچھ عرصے سے ایک تصویر گردش کررہی تھی جس میں وہ اسپتال کے بیڈ پر لیٹے نہایت کمزور لگ رہے تھے۔

انہوں نے  پاکستان ٹیلی وژن کے در نایاب ڈراموں بشمول شمع اور آخری چٹان میں بھی اپنی بے مثال اداکاری کے جوہر دکھائے اور انڈسٹری میں نام کمایا۔

انور اقبال کے خاندان کا کہنا ہے کہ چند ماہ قبل ان کی اہلیہ کا بھی انتقال ہوگیا تھا۔ مرحوم نے چار بیٹیاں، دیگر عزیز و اقارب اور پاکستان کے ڈرامہ و فلم شائقین کو سوگوار چھوڑا۔

متعلقہ خبریں

Pakistan kai adakar Anwar Iqbal inteqal ker gaey,انوراقبال، انوراقبال انتقال کرگئے