پاکستان اور ترکی کامسئلہ فلسطین عالمی سطح پر اٹھانے پراتفاق

وزیراعظم عمران خان اور رجب طیب اردوان نے غزہ پر اسرائیلی حملے کو عالمی قوانین کی خلاف ورزی قرار دیتے ہوئے مسئلہ فلسطین پر مل کر کام کرنے پر اتفاق کیا ہے۔ رہنماؤں کا کہنا ہے کہ پاک، ترک وزرائے خارجہ مسئلہ فلسطین عالمی سطح پر اٹھائیں گے۔

وزیراعظم عمران خان اور ترک صدر رجب طیب اردوان کے درمیان ٹیلی فون پر رابطہ ہوا، جس میں فلسطینیوں کیخلاف اسرائیلی بربریت اور جارحیت پر تبادلہ خیال ہوا۔

ٹیلی فون گفتگو کے اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ دونوں رہنماؤں نے رمضان میں مظلوم فلسطینیوں پر اسرائیلی حملہ قابل مذمت قرار دیا اور کہا کہ غزہ میں مسلمانوں پر حملہ عالمی قوانین کی خلاف ورزی ہے۔

اعلامیے کے مطابق پاکستان اور ترکی نے مسئلہ فلسطین کیلئے مل کر کام کرنے پر اتفاق کیا، پاک ترک وزرائے خارجہ مسئلہ فلسطین عالمی سطح پر اٹھائیں گے۔

اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ رمضان میں مظلوم فلسطینیوں پر اسرائیلی حملہ قابل مذمت ہے۔

اعلامیے کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے مسئلہ فلسطین کیلئے ترکی کے کردار کو سراہا، دونوں رہنماؤں نے پاک ترک دوطرفہ تعلقات کو فروغ دینے پر اتفاق کیا۔

اسرائیل نے رمضان المبارک کے آخری عشرے کی طاق رات میں مسجد اقصیٰ میں عبادت کرنے والوں پر حملہ کیا، فائرنگ اور گرینیڈ حملوں میں 300 سے زائد فلسطینی زخمی ہوگئے، جس کے بعد کئی شہروں میں جھڑپوں کا آغاز ہوا، فائرنگ کے واقعات میں کئی فلسطینی شہید ہوئے۔

جس کے بعد فلسطینی مزاحمتی تحریک حماس نے اسرائیل کو الٹی میٹم دیا، الٹی میٹم کے خاتمے پر راکٹ حملے کئے گئے، اسرائیل نے ایک بار پھر شہری آبادی کو نشانہ بنایا اور بمباری کردی۔

تین روز سے جاری فضائی حملوں میں 53 افراد شہید اور ایک ہزار سے زائد زخمی ہوگئے، شہداء میں 14 بچے بھی شامل ہیں جبکہ درجنوں عمارتیں ملبے کا ڈھیر بن گئیں۔

متعلقہ خبریں