پاکستان میں موجود تمام غیرملکیوں کو رجسٹرڈ کا فیصلہ،شیخ رشید

غیر ملکی شہریوں کو بنک اکاؤنٹ سم کیلئے اجازت دے رہے ہیں

Your browser does not support the video tag.

وزیرداخلہ شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ ملک میں موجود تمام غیر ملکیوں کو رجسٹرڈ کرنے کا فیصلہ کرلیا گیا ہے۔

جمعرات کو وزیرداخلہ شیخ رشید احمد نے نیشنل فرانزک لیب کا دورہ کیا اور صحافیوں سے بھی بات کی۔ انھوں نے کہا کہ فرانزک لیب کے معاملے میں 20 سال میں ایک جگہ پر کھڑے ہیں۔ تاہم اب 2.6 ارب روپے کا نیا پی سی ون ایک ماہ میں مکمل کروائیں گے۔

انھوں نےبتایا کہ کرونا وائرس سے بچاؤ کی ویکسینشن والے افراد کے لیے پاک افغان طورخم بارڈر کھول رہے ہیں اور این سی او سی سے بات کر سرحد پر رکے لوگوں کیلئے بات کی جائے گی۔

شیخ رشید نے مزید کہا کہ غیر ملکی شہریوں کو بنک اکاؤنٹ اور سم کیلئے اجازت دے رہے ہیں اور تمام غیر ملکیوں کورجسٹرڈ کا فیصلہ کر لیا ہے۔ افغان شہریوں سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ افغان جعلی آئی ڈی کارڈ کچھ افراد نے بنائے۔40 سے 50 ہزار افراد 70 سال کے دوران پاکستان میں داخل ہوئے اوران کا کوئی پتہ نہیں ہے۔

سیاسی امور سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ تحریک لبیک پاکستان  کا معاملہ اس ہفتے کابینہ میں جائے گا اور اس میں فیصلہ ہو جائے گا۔ پیپلزپارٹی کے چئیرمین بلاول بھٹو کیخلاف کوئی بات نہیں سن سکتا کیوں کہ بلاول دل کا جانی ہے۔ سیاسی ایکٹیویٹی ہونا اچھی بات ہے۔

شیخ رشید نے یہ بھی کہا کہ ملک میں منشیات کیخلاف بڑے پیمانے پر کارروائی کرنے جا رہے ہیں اور پاکستان میں منشیات اور آئس کوکین بیرون ملک سے آتی ہے۔

کشمیر سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ پاکستان تحریک انصاف آزاد کشمير ميں حکومت بنائے گی اور وزیراعظم عمران خان بھی انتخابی مہم کے سلسلے میں آزاد کشمیر جائیں گے۔

متعلقہ خبریں