پی ڈی ایم کا جلسہ: ’مریم نواز آپ کہاں ہیں، پوری قوم آپ کو بلا رہی ہے‘

اتوار 4 جولائی 2021 20:56

مولانا فضل الرحمان نے کہا عوام کا جذبہ سرد نہیں ہوا اور وہ ملک میں سیاسی اور آئینی حکمرانی کے لیے پرجوش ہیں۔ (فوٹو: ٹوئٹر)

پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ کا جلسہ سوات کے گراسی گراؤنڈ میں منعقد ہوا جس سے قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف، پی ڈیم ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان اور دیگر مرکزی قائدین نے خطاب کیا۔
اتوار کو منعقد ہونے والے جلسے میں  پی ڈی ایم کے ممبر جماعتوں کے کارکنان بڑی تعداد میں شریک ہوئے۔
پی ڈی ایم کے سوات جلسے کا سوشل میڈیا پر بھی خاصا چرچا رہا۔ تاہم صارفین کی ایک بڑی تعداد جلسے میں مسلم لیگ ن کی مرکزی رہنما مریم نواز کی عدم شرکت کو محسوس کیے بغیر نہیں رہ سکے۔
مزید پڑھیں
گوکہ شہباز شریف، مولانا فضل الرحمان اور دیگر رہنماؤں کی تقاریر اور پی ڈی ایم کی حکومت مخالف تحریک بھی زیر بحث ہے تاہم زیادہ تر صارفین سوال اٹھا رہے ہیں کہ مریم نواز نے اس جلسے میں شرکت کیوں نہیں کی۔
ٹوئٹر صارف ناصر خان نے لکھا کہ ’آپ کہاں ہیں؟ مریم نواز۔ پوری قوم آپکو بلا رہی ہے۔‘
صارف کاشف علی عباسی نے لکھا کہ  ’مریم میم نہیں تھی اس لیے میں نے تو جلسہ دیکھا ہی نہیں۔‘
صارفین کا کہنا تھا کہ سوات میں پی ڈی ایم کا شو بہت اچھا تھا لیکن مریم نواز کی عدم موجودگی سے پی ڈی ایم کی تحریک کو نقصان پہنچ سکتا ہے۔
صارف مشتاق ملک نے لکھا کہ پی ڈی ایم کی جانب سے ایک زبردست شو۔۔۔ لیکن باقی لوگوں کی طرح میں نے بھی مریم نواز کی دھواں دار تقریر کو مس کر رہا ہوں۔‘
ٹوئٹر صارف حبیب نے لکھا کہ ’پی ایم ایل این مریم نواز کے بغیر نامکمل ہے۔ کسی بھی ورکر کے لیے یہ ناقبل قبول ہے،  اور یہ سب نے پی ڈی ایم جلسے میں محسوس کیااس میں کوئی شک نہیں کہ وہ مجمع کو اپنی طرف متوجہ کرتی ہیں ۔ اور وہ واضح طور پر نواز شریف کے موقف کی حمایت کرتی ہے۔‘
سوات کے گراسی گراؤنڈ میں ہونے والے جلسے سے پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان  نے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔ مولانا نے کہا کہ قومی سلامتی کمیٹی میں عمران خان کو کسی نے نہیں بلایا اور پاکستان کی سیاست کا وہ غیر ضروری حصہ ہیں۔
مولانا فضل الرحمان نے کہا عوام کا جذبہ سرد نہیں ہوا اور وہ ملک میں سیاسی اور آئینی حکمرانی کے لیے پرجوش ہیں۔ ’ہم انشااللہ پاکستان سے اس ناجائز حکومت کا خاتمہ کرکے ہی دم لیں گے۔‘