کالام:زمین کے تنازعے پرفائرنگ،5افراد جانبحق

سوات کے علاقے وادی کالام میں دیسان بانڈہ کی ملکیت کے تنازع پر فرقین کے درمیان فائرنگ کے تبادلے میں 5افراد جاں بحق جبکہ 11 افراد زخمی ہوگئے۔
ریسکیو حکام کے مطابق 11زخمی افراد کو ابتدائی طبی امداد کے بعد کالام اسپتال منتقل کردیے گئے ہیں جہاں ڈاکٹرز نے 5افراد کی موت کی تصدیق کردی ہے تاہم ریسکیو حکام کے مطابق ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے۔
جبکہ بعض اطلاعات کے مطابق کالام والوں کی جانب سے راستہ بند ہونے کے باعث اتروڑ کے عوام نے کچھ زخمیوں کو باڈگوئی پاس کے راستے دیر بھی پہنچایا جہاں وہ اب زیر علاج ہیں۔
علاقہ میں حالات بدستور کشیدہ ہیں جبکہ ضلعی انتظامیہ کے مطابق حالات پر قابو پانے کے لیے پولیس اور ایف سی کی بھاری نفری جائے وقوع پر پہنچ گئی ہے۔
آخری اطلاعات تک علاقہ عمائدین کی کوششوں سے فائرنگ کا سلسلہ رکا ہوا تھا اور اس حوالے سے ایک جرگہ بھی جاری ہے تاہم اتروڑ میں موجود سیاحوں کی متعدد گاڑیوں کو روک دیا گیا ہے جن کے علاقے سے بحفاظت نکالنے کےلیے انتظامیہ کی کوششیں جاری ہے۔
وزیراعلی خیبرپختونخوا محمود خان نے دو گروپوں کے درمیان زمین کی تنازعے پر لڑاٸی میں جانی نقصان پر گہرے دکھ اور رنج کا اظہارکیا ہے۔
محمود خان نے کمشنر ملاکنڈ، ڈی آٸی جی ملاکنڈ اور تمام متعلقہ سیکورٹی اداروں کو امن وامان کی صورتحال برقرار رکھنے کےلیے اقدامات کی ہدایت کی ہے۔

متعلقہ خبریں