کراچی:بھینسےاورشہریوں کی آنکھ مچولی کی اصل وجہ سامنےآگئی

واقعے میں ملوث 8 افرادکو گرفتار کرلیا

Your browser does not support the video tag.

کراچی ميں ايک سیاہ بھينسا قربانی سے پہلے بے قابو ہوکر ڈھائی گھنٹے تک بھاگتا رہا۔ اس دوران علاقہ مکینوں اور گارڈز نے 20 سے زائد راؤنڈز فائر کئے اورعلاقہ میدان جنگ کا منظر پیش کرنے لگا۔

کراچی کے علاقے اسکیم 33 کی کراچی یونی ورسٹی ایمپلائز سوسائٹی میں بدھ کو عیدالضحی کے پہلے روز تقریبا 9 بجے سیاہ رنگ کا بھینسا قربانی سے پہلے بے قابو ہوگیا۔

جاندار بھینسے کو جس کھمبے سے باندھا گیا تھا وہ ٹيڑھا ہوا تو قصائی ڈر گئے۔ اس کے بعد بھینسے نے رسیاں توڑ دیں اور بھاگ نکلا۔ بھينسا سوسائٹي کےچکر لگاتا رہا اور اس کے بعد پیچھے لوگوں کا ہجوم تھا۔

بھينسے کو پکڑنے کے چکر ميں گلياں اور کھلے میدان مین اندھا دھن فائرنگ کی گئی۔ اس دوران چھوٹے سے لے کر بڑا اسلحہ تک استعمال ہوا۔

فائرنگ کرنے والے علاقے کی یونین کے افراد تھے اور ان کا ساتھ دینے کےلیے سوسائٹی کے گارڈز بھی شامل تھے۔

ڈسٹرکٹ ایسٹ پولیس نے واقعے میں ملوث 8 افرادکو گرفتار کرلیا ہے۔ گرفتار ملزمان کے قبضے سے فاٸرنگ میں استعمال اسلحہ رپیٹر بمع کارتوس برآمد کرلیے گئے۔ ملزمان کیخلاف اینیمل کرولٹی ایکٹ پاکستان پینل کوڈ کے تحت حسب ضابطہ کارواٸی عمل میں لاٸی جاٸے گی جبکہ مزید تفتیش جاری ہے۔

متعلقہ خبریں