کراچی:کروناويرينٹ کی تشخيص پی سی آرٹيسٹ کےذريعےممکن ہوگئی

پاکستان ميں پہلی مرتبہ کرونا ويرينٹ کی تشخيص پی سی آر ٹيسٹ کے ذريعے ممکن ہوگئی ہے۔

ڈاؤ میڈیکل یونیورسٹی نے کرونا وائرس کی تشخیص آسان بنا دی۔ اس ٹیسٹ سے یوکے ویرینٹ سمیت برازیلین ویرینٹ اور ساؤتھ افریقن ویرینٹ کی تشخیص بھی ممکن ہوگی۔

ڈاؤ ميڈيکل کالج کے کرونا ليب ہيڈ ڈاکٹر سعید خان نے بتایا کہ کرونا ویرینٹ کی تشخیص بہت مشکل کام تھا اور اس پر بہت اخراجات آرہے تھے تاہم اب پی سی آر ٹیسٹ نے تشخیصی عمل آسان بنادیا ہے۔

ڈاکٹر سعيد خان کے مطابق ٹيسٹ کو کمرشل بنياد پر استعمال کيا جاسکتا ہے اور اس پر صرف 3 ہزار روپے کا خرچہ آتا ہے۔ انھوں نے یہ بھی بتایا کہ ٹیسٹ کوعام لیب میں بھی اب استعمال کیاجاسکتا ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ کرونا ویرینٹس کی تشخیص کے ليے پی سی آر ٹیسٹ نہ صرف حکومتی پالیسیوں کے ليے سازگارہوگا بلکہ اس سے ڈاکٹروں کو بھی علاج کرنے میں آسانی ہوگی۔

متعلقہ خبریں