کراچی:ہیپناٹزم کےذریعےشہریوں کی جمع پونجی لوٹی جانےلگی

ایک بزرگ 35 لاکھ روپے کھو بیٹھے

کراچی میں لٹیروں نے شہریوں کو لوٹنے کا ایک اور انداز بھی اپنایا ہوا ہے جس میں وہ لوگوں کو ہیپناٹزم کے ذریعے مبہوت کرکے لاکھوں روپے ہتھا رہے ہیں۔

گو ایسے واقعات اکثر سننے میں آتے ہیں لیکن حال ہی میں کراچی کے علاقے گلشن اقبال میں ایسی ہی ایک واردات کی رپورٹ تھانے میں درج ہوئی ہے جس میں شکایت کی گئی ہے کہ ملزمان ایک بزرگ شہری کو ہیپناٹائز کرکے ان سے 35 لاکھ روپے کی رقم لے کر فرار ہوگئے۔

پولیس نے روایتی ٹال مٹول کے بعد مذکورہ مقدمہ درج کرلیا ہے جبکہ اس واردات کی سی سی ٹی وی فوٹیجز بھی سامنے آگئی ہیں۔

ایک 74 سالہ بزرگ کے مطابق گلشن اقبال بلاک 13 ڈی ون میں ایک شخص نے راستے میں انہیں روکا اور اپنے بچے کے لاپتہ ہونے کا بہانہ بنا کر بات شروع کی۔ اسی اثناء میں ملزم کا ایک اور ساتھی راہگیر بن کر وہیں آ گیا اور ان دونوں کی گفتگو میں شامل ہوگیا۔

بزرگ شہری کے مطابق ملزمان نے ان کے ہاتھ پر کاغذ رکھا جو چند سیکنڈ میں جل گیا جس کے بعد وہ ہیپناٹائز ہوگئے اور وہ مبہوت سے ہوگئے۔

بزرگ شہری کے بیٹے اسلم کا کہنا ہے کہ والد نے 25 لاکھ کے پرائزبانڈ اور 10 لاکھ کیش خود گھر سے کپڑے کے تھیلے میں لے جاکر کر ملزمان کے حوالے کیے۔

ملزمان نے اسی کپڑے کے تھیلے میں چالاکی سے پیسے نکال کر کچرا بھردیا۔ واقعے کے متاثرین کا کہنا ہے کہ انہوں نے علاقے میں لگے سی سی ٹی وی کیمروں کی فوٹیج سے ملزمان کی گاڑی کا نمبر تک حاصل کرلیا ہے جس کے باوجود پولیس نے انتہائی مشکل سے واقعہ کا مقدمہ درج کیا۔

متعلقہ خبریں