کراچی میں بجلی کا بڑا بریک ڈاؤن

کراچی میں ہفتے کو بجلی کا بڑا بریک ڈاؤن ہوا جس کے باعث متعدد علاقوں میں بجلی کی فراہمی معطل ہوگئی ہے، تقریباً 6 گھنٹے گزرنے کے باوجود کئی علاقوں میں بجلی بحال نہیں ہوسکی۔ کے الیکٹرک کا کہنا ہے کہ بجلی کی بحالی کیلئے کام جاری ہے۔

کراچی میں ہفتے کی دوپہر تقریباً ایک بجے بجلی کے بڑے بریک ڈاؤن کے باعث ناظم آباد، نارتھ کراچی، نارتھ ناظم آباد، بفرزون، گوليمار، لانڈھی، لياقت آباد، ایف بی ايريا سميت ديگر علاقے بجلی سے محروم ہوگئے۔ بجلی بند ہونے سے پاک کالونی، بڑا بورڈ، ملیر، گڈاپ، گلستان جوہر، گلشن اقبال اور ڈی ايچ اے اور اطراف کے علاقے بھی متاثر رہے۔

کراچی میں جمعہ کی رات سے بجلی کی فراہمی متاثر ہورہی تھی اور کئی علاقوں کو لوڈ شیڈنگ کا سامنا تھا۔ کے الیکٹرک کے مطابق بجلی کی ہائی ٹینشن لائن ٹرپ ہونے سے بجلی بند ہوئی ہے، بجلی کی بحالی کا عمل شروع ہوچکا ہے اور مکمل بحالی میں چند گھنٹے لگ سکتے ہیں۔

کراچی میں بجلی کی طلب 3000 میگا واٹ سے تجاوز کرگئی ہے، کے الیکٹرک کی جانب سے متعدد علاقوں میں غیر اعلانی لوڈ شیڈنگ کی جارہی ہے۔

کےالیکٹرک کا کہنا ہے کہ فالٹس کے باعث کچھ علاقوں میں بجلی کی فراہمی بند ہوئی ہے۔ وزارت توانائی کی جانب سے جاری ٹویٹ میں بتایا گیا ہے کہ شہر کو بجلی فراہم کرنے والی این کے آئی بلدیہ ون اور ٹو میں خرابی کے باعث بجلی کی فراہمی معطل ہوئی ہے۔

وزارت توانائی کا کراچی میں بجلی کے بریک ڈاؤن پر کہنا ہے کہ ٹرپنگ سے شہر قائد کو بجلی کی فراہمی متاثر ہوئی، اس کی وجوہات سے متعلق تفتیش کی جارہی ہے، باقی ملک کا پورا سسٹم اس وقت بالکل نارمل ہے۔

کے الیکٹرک نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ بن قاسم پاور اسٹیشن پر تحقیقات مکمل ہوگئی ہیں، کسی بھی پیداواری یونٹ میں تکنیکی فالٹ نہیں۔

متعلقہ خبریں