کرسٹیانو رونالڈو کی وجہ سے کوکا کولا کو ’اربوں ڈالر کا نقصان‘

بدھ 16 جون 2021 10:37

کرسٹیانو رونالڈو نے پریس کانفرنس کے دوران اپنے سامنے رکھی کوکا کولا کی دو بوتلیں ہٹا کر ایک طرف رکھ دیں۔ (فوٹو: سکرین گریب)

دنیا بھر میں کمپنیاں اپنی مصنوعات کی تشہیر کے لیے نامور شخصیات کا انتخاب کرتی ہیں کیونکہ انہیں اندازہ ہوتا ہے کہ صارفین ان سلیبریٹیز کی وجہ سے ان کی پراڈکٹ کی طرف مائل ہوں گے۔
لیکن اگر یہی سلیبریٹیز کسی پراڈکٹ کے خلاف کوئی پیغام دے دیں تو یہ اس کمپنی کے لیے مالی طور پر ایک بڑا دھچکا بھی ثابت ہو سکتا ہے۔
مزید پڑھیں
ایسا ہی کچھ دنیا کی مقبول سافٹ ڈرنک کمپنی کوکا کولا کے ساتھ ہوا جب پرتگال کے عالمی شہرت یافتہ فٹ بالر کرسٹیانو رونالڈو نے ایک پریس کانفرنس کے دوران میز پر رکھی کوکا کولا کی دو بوتلیں ہٹا دیں۔
برطانوی اخبار ’دا گارڈین‘ کے مطابق پیر کو یورپی فٹ بال چیمپیئن شپ میں 36 سالہ کرسٹیانو رونالڈو نے بوداپسٹ پریس کانفرنس کے دوران اپنے سامنے میز پر رکھی کوکا کولا کی دو بوتلیں ہٹا کر ایک طرف رکھ دیں اور پانی کی بوتل اٹھا کر پرتگالی زبان میں کہا ’ایگوا‘۔۔ جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ وہ لوگوں کو کوکا کولا کے بجائے پانی پینے کی ترغیب دے رہے ہیں۔
رونالڈو کے اس عمل کے بعد کوکا کولا کے شیئرز غیرمعمولی حد تک گر گئے اور سافٹ ڈرنک کی مارکیٹ ویلیو 242 ارب ڈالر سے 238 ارب ڈالر پر چلی گئی۔
کوکا کولا کمپنی جو یورپی فٹ بال چیمپیئن شپ کو سپانسر کر رہی ہے، نے منگل کو اپنے ایک بیان میں کہا کہ ’ہر کسی کو اپنے ذائقے اور ضرورت کے مطابق اپنے لیے مشروب کا انتخاب کرنے کا حق حاصل ہے۔‘
یوروز کے ترجمان کا کہنا ہے کہ ’کھلاڑیوں کو پریس کانفرنس کے دوران پانی کے ساتھ ساتھ کوکا کولا اور کوکا کولا زیرو بھی پیش کی جاتی ہے۔‘
سوشل میڈیا پر بھی رونالڈو کا یہ ویڈیو کلپ وائرل ہے اور صارفین کی بڑی تعداد ان کے اس عمل کو ’مثبت پیغام‘ قرار دیتے ہوئے سراہ رہی ہے۔

کرسٹیانو رونالڈو فینز کے نام سے ٹوئٹر ہینڈل نے لکھا کہ ’کوکا کولا یوروز میں اپنی تشہیر کے لیے کافی رقم ادا کرتا ہے، پریس کانفرنس کے دوران کھلاڑیوں کے سامنے کوکا کولا کی بوتلیں رکھی جاتی ہیں، رونالڈو نے بوتلیں دیکھتے ہوئے انہیں ایک طرف کر دیا اور پانی کی بوتل اٹھاتے ہوئے لوگوں کو صحت مند پینے کی ترغیب دی۔‘

کارلوس ڈی نامی صارف نے لکھا کہ ’مجھے کوک زیرو بہت پسند ہے لیکن میں رونالڈو کے عمل کی پیروی کروں گا۔ آج میں نے اپنی آخری کوکا کولا پی ہے۔ کرسٹیانو رونالڈو شکریہ مجھے صحت مند غذا کی ضرورت ہے۔‘

ایک اور صارف انجلی لال نے لکھا کہ ’میں فٹ بال میں زیادہ دلچسپی تو نہیں رکھتی لیکن مجھے معلوم ہوا ہے کہ کرسٹیانو نے کوکا کولا کے بجائے پانی کو ترجیح دی۔ ایسے لوگ پسند ہیں جو زندگی کے ہر شعبے میں حقیقی رہتے ہیں۔‘

فار فیوچر کنسیڈیشن کے نام سے ٹوئٹر ہینڈل نے لکھا کہ ’میرا نہیں خیال کہ رونالڈو جلد کوکا کولا کا اشتہار کریں گے۔‘

لیوک ڈف کے نام سے صارف نے ایک میم کے ذریعے کوکا کولا کے مارکیٹنگ مینیجر کا ردعمل بیان کرنے کی کوشش کی ہے۔