کرکٹ کیریئرکی ابتدا میں باصلاحیت کھلاڑی نہیں تھا،عمران خان

غلطیوں کی نشان دہی کرنے کی دوسروں سے زیادہ صلاحیت تھی

عمران خان نے کہا ہے کہ کرکٹ کیریئرکی ابتدا میں وہ باصلاحیت کھلاڑی نہیں تھے۔انھیں پہلےٹیسٹ میچ کے بعد3 برس کےلیےٹیم سے ڈراپ کردیا گیا تھا۔

کولمبومیں بدھ کواپنےاعزازمیں منعقدتقریب سےخطاب کرتےہوئے عمران خان نے بتایا کہ ان کے دو فرسٹ کزنز قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان تھے اور ان سے زیادہ باصلاحیت تھے۔

انھوں نےکہا کہ ہمیشہ یہ ہی کہا جاتا تھا کہ عمران خان اپنے دونوں کزنز کےمقابلےمیں اچھےکھلاڑی نہیں ہیں۔پہلے ٹیسٹ میچ کے بعد جب انھیں ڈراپ کیا گیا تو ہرکسی کا کہنا تھا کہ اب ان کی واپسی ممکن نہیں ہوگی۔

عمران خان نے کہا کہ کئی ایسے کھلاڑی گزرے جوپہلے ٹیسٹ میچ میں ڈراپ ہونےکےبعدکبھی ٹیم میں واپس نہیں آسکے۔ انھوں نےبتایا کہ ان کےپاس اس وقت دو راستے تھے کہ ہمت ہار کر کوئی اور پیشے اختیار کریں یا پھر اپنی خامیوں اور پہلے ٹیسٹ ٹور سے سبق سیکھیں۔

انھوں نےیہ بھی بتایا کہ ان کی کامیابی کی وجہ یہ تھی کہ انھیں غلطیوں کی نشان دہی کرنے کی دوسروں سے زیادہ صلاحیت تھی۔

متعلقہ خبریں