کم کارڈیشیئن کو اٹلی سے قدیم مجسمہ ’سمگل‘ کرنے کے الزام کا سامنا

بدھ 5 مئی 2021 7:01

یہ مجسمہ 2016 میں لاس اینجلس ایئرپورٹ پر پکڑا گیا تھا (فوٹو: اے ایف پی)

امریکی رئیلٹی سٹار کم کرڈیشیئن پر الزام لگایا جا رہا ہے کہ ان کے نام پر ایک قدیم رومن مجسمہ اٹلی سے امریکہ ’سمگل‘ کیا گیا ہے۔
فرانسیسی خبر رساں ایجنسی اے ایف پی کے مطابق یہ مجسمہ 2016 میں لاس اینجلس ایئرپورٹ پر پکڑا گیا تھا۔ ایک اطالوی ماہر آثار قدیمہ نے کہا تھا کہ ’یہ مجسمہ لُوٹا گیا اور غیرقانوی طور پر برآمد کیا گیا۔‘
عدالتی دستاویز کے مطابق امپورٹر اور اسے موصول کرنے والے کا نام ’کم کارڈیشیئن ڈی بی اے نوئیل رابرٹس ٹرسٹ ہے اور انوائس کے مطابق اسے ایلکس ورورڈٹ نے نوئیل رابرٹس ٹرسٹ کو 11 مارچ 2016 کو فروخت کیا۔‘
مزید پڑھیں
نوئیل رابرٹس ٹرسٹ امریکہ میں ریئل سٹیٹ کے کاروبار کے ساتھ منسلک ہے اور اسے کم کارڈیشیئن اور ان کے شوہر کینی ویسٹ نے بنایا۔
آرٹ نیٹ نیوز ویب سائٹ کے مطابق ایلکس ورورڈٹ بیلجیئم کے آرٹ ڈیلر ہیں اور وہ لاس اینجلس میں کم کارڈیشیئن کے گھر کی سجاوٹ کے ذمہ دار تھے۔
 تاہم منگل کو کم کارڈیشیئن کی ایک ترجمان نے امریکی میڈیا کی طرف سے مجسمے کو رئیلٹی سٹار کے ساتھ جوڑنے کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ وہ حقائق نہیں بتا رہا۔
اطالوی ماہر آثار قدیمہ، جنہوں اس مجسمے کا مطالعہ کیا، نے کہا کہ یہ ’کلاسیکل پیپلوفارس سٹائل‘ کا ہے۔
یہ مجسمہ 2016 میں لاس اینجلس پہنچے والی ساڑھے سات لاکھ ڈالرز کی ایک شپمنٹ کا حصہ تھا جس کے ساتھ مطلوبہ دستاویزات نہیں تھیں۔